انتخابات میں حصہ لینے والے امیدوار ہوجائیں تیار، کاغذات نامزدگی کی اسکروٹنی مزید سخت

انتخابات میں حصہ لینے والے امیدوار ہوجائیں تیار، کاغذات نامزدگی کی اسکروٹنی مزید سخت


اسلام آباد (24 نیوز) امیدواروں کے کاغذات نامزدگی کی جانچ پڑتال کےطریقہ کار کے معاملہ پر الیکشن کمیشن میں اہم اجلاس ہوا۔ اجلاس میں ایف آئی اے کو پہلی بار امیدواروں کی سکروٹنی کے عمل میں شامل کرنے سمیت امیدواروں کے کاغذات کی سکروٹنی کا وقت بھی سات دن سے بڑھا کر آٹھ دن کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔

 یہ خبر بھی پڑھیں:   نگران وزیراعظم کا تاج کس کےسر سجےگا؟ خورشید شاہ نے بتا دیا

 24 نیوز ذرائع کے مطابق آئندہ عام انتخابات میں امیدواروں کے کاغذات نامزدگی کی جانچ پڑتال سے متعلق طریقہ کار پر چیف الیکشن کمشنر کی زیر صدارت اجلاس ہوا۔ اجلاس میں ایف آئی اے کو پہلی بار سکروٹنی کے عمل میں شامل کرنے سمیت امیدواروں کے کاغذات کی سکروٹنی کا وقت بھی سات دن سے بڑھا کر اٹھ دن کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

 الیکشن کمیشن نے سکروٹنی سے متعلق اداروں سے تجاویز مانگ لیں۔ ساتھ ہی سکروٹنی سخت اور بروقت کیے جانے کی ہدایت بھی کی۔

چیف الیکشن کمشنر کا کہنا تھا کہ آئین کے آرٹیکل 62 اور 63 پر اس کی روح کے مطابق عمل کیا جائے، اور کسی بھی سرکاری ادارے سے ڈیفالٹر امیدوار کا ریٹرننگ آفیسر کو بتایا جا سکتا ہے۔

پڑھنامت بھولئے:  پاکستانی ائیرلائن ڈوب گئی، دبئی سے آنے والی تمام پروازیں متاثر

اجلاس میں سکروٹنی کا عمل تیز کرنے کے لیے ریٹرننگ افسران کواداروں سے ڈیٹا الیکٹرانکلی ترسیل کروانے کی تجویز زیر غور آئی۔ الیکشن کمیش نے ڈیٹا الیکٹرانکلی بجھوانے کے لیے نادرا کو سافٹ وئیر تیار کرنے کی بھی ہدایات کر دی۔ اجلاس میں نادرا، ایف آئی اے، اسٹیٹ بینک، نیب، واپڈا اور سوئی ناردرن کے حکام نے بھی شرکت کی۔