پیپلز پارٹی کا بڑا قدم،بے نام قبیلے کو قومی شناخت دیدی

پیپلز پارٹی کا بڑا قدم،بے نام قبیلے کو قومی شناخت دیدی


کراچی( 24نیوز ) پاکستان پیپلزپارٹی کا ایک اور بڑا اقدام، بدین کے پسماندہ علاقے سے تعلق رکھنے والی تنزیلہ قمبرانی کو مخصوص نشست پر ایوان میں لے آئی، تنزیلہ کہتی ہے کہ مجھے میری قوم کو پہچان بلاول بھٹو زرداری نے دی ہے۔
پاکستان پیپلزپارٹی کا ایک اور بڑا اقدام، بدین کے پسماندہ علاقے سے تعلق رکھنے والی تنزیلہ قمبرانی کو مخصوص نشت پر ایوان میں لے آئی، تنزیلہ کہتی ہے کہ مجھے میری قوم کو پہچان بلاول بھٹو زرداری نے دی ہے،ان کا کہنا ہے کہ ان کی کمیونٹی میں بچہ جب بولنا اور چلنا شروع کرتا ہے تو وہ ’دلاں تیر بجا‘ پر جھومتا ہے۔ شیدی کہیں بھی ہو وہ پیپلز پارٹی کا شیدائی ہوگا۔
نتزیلہ کا کہنا ہے کہ اپنی نامزدگی کو وہ شیدی کمیونٹی کی پہچان قرار دیتی ہیں، بقول ان کے یہ پہچان بلاول بھٹو نے دی ہے ورنہ شیدیوں کو کہیں شمار نہیں یا جاتا تھا، کسی کو پتہ ہی نہیں تھا کہ پاکستان میں شیدی بھی رہتے ہیں،جس طرح کولمبس نے امریکہ دریافت کیا تھا، بلاول بھٹو نے ہمیں دریافت کیا ہے
یاد رہے برصغیر میں افریقہ سے سیاہ فام غلام لائے جاتے تھے، برطانوی پارلیمنٹ نے 1833 میں غلامی کے خاتمے کا قانون پاس کیا تھا، دس سال بعد انڈیا میں بھی پابندی عائد ہوئی اور سیاہ فام غلاموں کو آزادی ملی، یورپ میں پابندی کے بعد تنزانیہ سے سیاہ فام غلاموں کو بحری جہازوں میں دیگر علاقوں میں منتقل کیا جاتا تھا، آج کے پاکستان میں ان کی آبادیاں سمندر کے قریبی علاقوں میں نظر ائیں گی۔

 یہ بھی پڑھیں:    نتائج روکے جانے سے پی ٹی آئی کا کیا نقصان ہوگا؟
تھا کہ پاکستان کے شیدی کونسے ہیں اور افریقی شیدی کونسے ہیں۔ اسی طرح دوسری بہن کی شادی گھانا میں سپونگ قبیلے میں ہوئی۔