سوشل میڈیا کا استعمال نو عمر لڑکیوں کیلئے ڈپریشن کی وجہ بننے لگا

سوشل میڈیا کا استعمال نو عمر لڑکیوں کیلئے ڈپریشن کی وجہ بننے لگا


لندن(24نیوز) آج کل لڑکوں اور لڑکیوں میں سوشل میڈیا کا رجحان عروج کو پہنچ چکا ہے۔ سوشل میڈیا کے استعمال کے جہاں فوائد ہیں وہیں اس سے زیادہ اس کے نقصانات بھی ہیں۔ برطانیہ میں ریسرچ کی گئی ہے کہ سوشل میڈیا کے نقصانات کا زیادہ اثر لڑکوں پر ہوتا ہے یا لڑکیوں پر؟

ای کلینکل میڈیسن نامی جریدے میں شائع رپورٹ کے مطابق 11 ہزار سے زائد نو عمر لڑکے لڑکیوں کا سروے کیا گیا جن کی عمر 14 سال ہے۔ سروے کے مطابق سوشل میڈیا کا زیادہ استعمال لڑکیاں کرتی ہیں جن کی 40 فیصد تعداد کم سے کم 3 گھنٹے جبکہ 20 فیصد لڑکے اتنے وقت کیلئے سوشل میڈیا کا استعمال کرتے ہیں۔

سروے سے پتا چلا کہ سوشل میڈیا کا ساڑھے پانچ گھنٹے روزانہ استعمال کرنے والی لڑکیوں کی 38 فیصد تعداد ڈپریشن کا شکار تھیں۔ ماہرین کے مطابق 40 فیصد لڑکیوں اور 25 فیصد لڑکوں میں کو آن لائن ہراساں کیا جاتا ہے۔ لڑکیاں رنگت، جسامت کے معاملے میں زیادہ فکر مند رہتی ہیں تاہم لڑکے ان چیزوں کو خاطر میں نہیں لاتے۔  

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔