کپتان ن لیگ کے گھر میں نقب لگانے کو تیار, مزید وکٹیں گرائیں گے


اسلام آباد( 24نیوز )الیکشن قریب آتے ہی مسلم لیگ ن کے ارکان اسمبلی خزاں کے پتوں کی طرح بکھر رہے ہیں،یہ پتے اڑ کر ادھر ادھر ہو رہے ہیں،سب سے زیادہ لوگ پی ٹی میں جارہے ہیں،پی ٹی آئی ن لیگ کے لوگ تو توڑ ہی رہی ہے ساتھ ساتھ پیپلز پارٹی بھی اس کھیل میں شامل ہے،کچھ کو تو عدالتیں بھی فارغ کررہی ہیں۔
گزشتہ روز جعلی ڈگری کے بعد دھاندلی ثابت ہونے پر خوشاب سے سابق رکن قومی اسمبلی ،چیئرمین ڈسٹرکٹ کونسل خوشاب سمیرا ملک کو عہدہ سے ہٹا دیا گیا تھا،سمیرا ملک مسلم لیگ ن کی رہنماءہیں یہ اسی جماعت کے ٹکٹ پر ایم این اے منتخب ہوئیں اور بعد میں ڈسٹرکٹ چیئرمین خوشاب بھی ن لیگ کی ٹکٹ پر ہی بنی تھیں۔

یہ بھی پڑھیں:تحریک انصاف کا بڑا کھڑاک،ایک ہی دن میں 3 وکٹیں اڑالیں
ن لیگ کو سب سے بڑا جھٹکا جنوبی پنجاب سے ارکان قومی و صوبائی اسمبلی نے دیا،انہوں نے پہلے جنوبی پنجاب محاذ بنایا تو اب اسے تحریک انصاف میں ضم کردیا ہے، پی ٹی آئی رہنماﺅں کا کہنا ہے کہ جنوبی پنجاب صوبہ محاذ سے درخواست کی تھی کہ اکٹھے ہوکر صوبے کے لیے کوشاں ہوں اور اسے کامیاب بنائیں، ہم مل کر الیکشن لڑیں گے جو (ن) لیگ کو بڑا جھٹکا ہے، (ن) لیگ کا وجود جنوبی پنجاب میں بہت کم رہ گیا ہے اور پیپلزپارٹی کا خاتمہ ہوگیا ہے، (ن) لیگ کے 6 ایم این ایز اور 2 ایم پی ایز نے پارٹی سے استعفیٰ دیا۔

یہ خبر لازمی پڑھیں:کپتان نے ن لیگ کی دو وکٹیں اُڑا دیں

اسی طرح گوجرانوالہ،ٹوبہ ٹیک سنگھ،فیصل آباد سے بھی متعدد ارکان اسمبلی اور سابق رہنما ن لیگ کو چھوڑ کر پی ٹی آئی اور پیپلز پارٹی کی منڈیر پر بیٹھ چکے ہیں۔
ذرائع کے مطابق ضلع مظفر گڑھ سے تعلق رکھنے والے تین ارکان اسمبلی آج ن لیگ کو خیبر باد کہہ کر عمران خان کے قافلے میں شامل ہوجائیں گے،ایم این اے سلطان احمد ہنجرا،ایم پی اے احمد یار ہنجرا اور ایم این اے عاشق گوپانگ آج شام پریس کانفرنس میں پارٹی چھوڑنے کا اعلان کرینگے۔