چیف جسٹس پاکستان کا سانحہ اے پی ایس پر جوڈیشل کمیشن بنانے کا حکم


پشاور (24 نیوز) چیف جسٹس پاکستان میاں ثاقب نثار نے پشاور رجسٹری میں ہسپتالوں میں طبی سہولیات، اسپتالوں کا فضلہ ٹھکانے لگانے۔ سکولوں میں بنیادی سہولیات کی عدم فراہمی، 2005 زلزلہ متاثرین کیس، صاف پانی کیس، ساںحہ آرمی پبلک اسکول سمیت اہم کیسز کی سماعت کی۔

چیف جسٹس نے لیڈی ریڈینگ ہسپتال پشاورکےتین سال سے بند گیٹ کھلوادئیے۔ گیٹوں کی بندش سے لوگوں کو شدید مشکلات کا سامنا تھا۔آرمی پبلک سکول کیس کی سماعت میں چیف جسٹس نے جوڈیشل کمیشن بنانے کا حکم دے دیا۔ کمیشن کو دو ماہ کے اندر رپورٹ پیش کرنے کا حکم دے دیا۔

چیف جسٹس نے پشاورمیں چیک پوسٹس ختم کرنے کے احکامات جاری کر دئیے۔ چیف جسٹس نے کہا کہ جتنے راستے بند ہیں۔ ان کو 48 گھنٹوں میں کھول دیں۔مینٹل سپتال کی حالت زار پر چیف جسٹس نے چیف سیکرٹری کو حاضر کرلیا۔ چیف جسٹس نے کہا کہ سیکرٹری صاحب مان لیں کہ انتظامات انتہائی ناقص ہیں۔ چیف جسٹس نے خواتین جیل کا دورہ کیا اور قیدیوں کے مسائل بھی سنے۔