داعش کی غلامی سے فرار ہونیوالی لڑکی نے امن کا نوبل ایوارڈ حاصل کر لیا

داعش کی غلامی سے فرار ہونیوالی لڑکی نے امن کا نوبل ایوارڈ حاصل کر لیا


اوسلو ( 24 نیوز ) اوسلو میں نوبل انعامات کی تقسیم کیلئے تقریب کا اہتمام کیا گیا،  تقریب میں ڈینس مکویگے اور نادیہ مراد کو امن کا نوبل انعام دیا گیا۔

انعامات سویڈن کے صنعت کار ایلفرڈ نوبل کی یاد میں دیے جاتے ہیں،  نوبل امن انعام کے شریک حقدار قرار پانے والے کانگو کے ڈاکٹر ڈینس مکویگے اور یزیدی کارکن نادیہ مراد کو ناروے کے دارالحکومت اوسلو میں ہونے والی ایک تقریب کے دوران باقاعدہ طور پر یہ انعام دیا گیا، نادیہ مراد اور ڈاکٹر ڈینس موکیگی کو گولڈ میڈل، ڈپلومہ اور 10 لاکھ ڈالرز کی انعامی رقم دی گئی، 10 لاکھ ڈالرز کی انعامی رقم ایوارڈ جیتنے والی دونوں شخصیات کے درمیان تقسیم ہو گی۔

یاد رہے نادیہ مراد   کو داعش کی غلامی سے فرار ہونے کے بعد خواتین کے حقوق کے لیے کام کرنے پر نوبیل ایوارڈ سے نوازا گیا جب کہ ڈاکٹر ڈینسمکویگے کو جنگ زدہ ملک جمہوریہ کانگو میں تشدد کا نشانہ بننے والی خواتین کی مدد کرنے پر نوبیل امن انعام سے نوازا گیا۔