اغوا کے بعد زیادتی اور برہنہ وڈیوز بنا نے والے گروہ گرفتار،شرمناک ویڈیو منظرعام پر آگئی


ملک وال(24نیوز) کم عمر لڑکوں کی برہنہ ویڈیوز بنانے والا گروہ بے نقاب ہوگیا،لڑکوں کو اغوا کے بعد زیادتی اور برہنہ وڈیوز بنا نے والے گروہ گرفتار،15 سے زائد اوباش نوجوانوں کے جھولے لعل گروپ نے کئی لڑکوں کی زندگیوں میں زہر گھول دیا،علاقہ میں خوف پھیل گیا،والدین بچوں کو باہربجھوانے سے گھبرانےلگے۔

تفصیلات کے مطابق جھولےلعل گروپ ملکوال میں لڑکوں کو اغواکرکے اپنی ہوس کا نشانہ بنا نے کی شہرت رکھتا ہے۔ محلہ قصاباں میں محمد رمضان کا بیٹا سیف الرحمن بھی اسی گروپ کا نشانہ بنا۔ گروہ کےارکان نے سیف الرحمن کے ساتھ زیادتی کی اورویڈیو بھی بنائی۔ گروہ کے ارکا ن ارسلان شاہ، ارسلان موچی اور زین شاہ نے سیف الرحمن کے لواحقین کو بلیک میل کرکے لاکھوں روپے بھی وصول کئے۔

یہ بھی ضرور پڑھیں:ٹکٹ نہ ملے تو الگ گروپ بنا کر الیکشن لڑیں گے،کپتان کے کھلاڑی باغی ہوگئے 

 سیف کے والد رمضان نے بتایا کہ یہ گروپ میرے بیٹے کے علاوہ بھی متعدد بچوں کے ساتھ زیادتی کی۔جھولے لعل گروپ کے ارکان سرعام گھومتے پھرتےہیں۔ پولیس تاحال کسی بھی ملزم کو پکڑنے میں ناکام رہی۔

24 نیوز خبر دی تو ایکشن ہو گیا۔ملک وال میں کم عمر لڑکوں کی برہنہ ویڈیوز بنانے والا گروہ بے نقاب ہوگیا۔ برہنہ ویڈیوز بنا کر بلیک میل کرنے والے جھولے لعل گروپ کا معاملہ 24 نیوز نے اٹھایا تو پولیس حرکت میں آ گئی۔ پولیس کا کہنا تھا کہ 5 ملزموں کیخلاف مقدمہ درج، ایک ملزم زین جٹ کو گرفتار کرلیا ۔ ملزم نے سیف نامی لڑکے کی برہنہ ویڈیو بنا کر زیادتی کی کوشش کی ۔