"غربت کے خاتمے کیلئے جلد بڑے پیکج کا اعلان کریں گے"


 لاہور(24نیوز) وزیراعظم عمران خان نے شیلٹرہوم کا سنگ بنیاد رکھ دیا، اس موقع پر  تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ جنوبی پنجاب میں ترقی کےلیےعثمان بزدارکووزیراعلیٰ بنایا, غربت کے خاتمے کیلئے بڑے پیکج کااعلان کریں گے۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان ایک روزہ دورے پر لاہور پہنچے جہاں انہوں نے ریلوے اسٹیشن کے باہر مسافر خانے کا سنگ بنیاد رکھنے کے بعد تقریب سے خطاب بھی کیا۔ وزیراعظم کا کہنا تھا کہ احساس اوررحم کےجذبےکےتحت شیلٹرہوم بنانےکافیصلہ کیا، جس کےدل میں رحم نہیں وہ انسان نہیں ہوتا۔ احساس اوررحم کےبغیرکوئی معاشرہ مکمل نہیں ہوسکتا، انسان اشرف المخلوقات ہے لیکن جب یہ گرتا ہے تو حیوان سے نیچے آ جاتا ہے، کردارکی وجہ سےہی انسان فرشتوں سےبلندمرتبہ حاصل کرتاہے، مجھے ووٹ سے غرض نہیں انسانیت کی خد مت میرا نصب العین ہے۔

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ لوگ سڑکوں پرہیں اورکسی کو کوئی فکرنہیں جن کے سرپرچھت نہیں وہ سڑکوں پرکیسےرہتےہوں گے؟ شیلٹرہوم چلانےکےلیےبورڈقائم کریں گے، شیلٹرہوم میں3وقت کاکھانادیاجائےگا، رات کو کھلے آسمان تلےسونے والوں کیلیے لاہور میں 5 پناہ گاہیں قائم کی جائیں گی، ہم نے احساس پر مبنی ایک معاشرے کو تشکیل کرنا ہے، پاکستان ایک ایسا ملک بنے گا جو دنیا میں مثال ہوگا، وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ ہمیں حکومت میں آتے ہی مسائل کا سامنا کرنا پڑا،ملک کوڈیفالٹ ہونے سےبچانے کے لیےاقدامات کیے،اللہ کاشکرہےادائیگیوں کامسئلہ  بھی حل ہوگیا۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ ہمارا ملک صرف ایک مقصد کے لیے بنا تھا، سردارعثمان بزدارعوام کی فلاح وبہبودکےلیےکام کررہےہیں، جنوبی پنجاب میں تر قی کے لئے ان کو وزیر اعلیٰ پنجاب بنایا، جنوبی پنجاب میں بھی سہولیات کا فقدان ہے، عثمان بزدارکا تعلق اس علاقے سےہےجہاں بجلی نہیں، ایسےلوگوں کوغریبوں کی مشکلات کااحساس ہوتاہے،پنجاب میں بادشاہت کاتصوربن چکاتھا، ہمارے ہاں وسائل  کی نہیں احساس کی کمی ہے۔

قائداعظم ایک فلاحی ریاست کا قیام چاہتےتھے، ان کا کہنا تھا کہ پاکستان کوقائداعظم اورعلامہ اقبال کاپاکستان بنائیں گے، علامہ اقبال اور قائداعظم دنیا کے عظیم مفکرین میں سے تھے، وزیراعظم عمران خان کا مزید کہنا تھا کہ آنیوالے دنوں میں غربت ختم کرنے کیلیے ایک پیکیج لےکر آئیں گے ، غربت کے خاتمے کے لیے اقدامات کریں گے، حکومتیں چلتی رہتی ہیں لیکن فلاحی منصوبوں پر کام کرنے سے خوشی ہوتی ہے۔

قانون کی حکمرانی سپریم کورٹ کے فیصلوں پر عملدرآمد کرنے سے ممکن ہے ،سپریم کورٹ کے فیصلوں پرعمل نہ کیا جائےتوقانون کی حکمرانی ختم ہو جائے گی،سپریم کورٹ کے فیصلوں پرمکمل عمل درآمد ہوگا،اس کے علاوہ 100روزہ ایجنڈےکی کارکردگی جلدعوام کےسامنےہوگی۔