سٹیزن پورٹل پر کام کرنیوالےافسران کی شامت آگئی

سٹیزن پورٹل پر کام کرنیوالےافسران کی شامت آگئی


اسلام آباد( اویس کیانی) وزیر اعظم عمران خان نے  سیٹزن پورٹل پر شہریوں کی شکایات کو سنجیدہ نہ لینےوالے افسران کے خلاف کارروائی اور  وزارتوں اور محکموں میں 5 رکنی کمیٹی بنانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق  وزیر اعظم عمران خان نےسیٹزن پورٹل پر شہریوں کی شکایات کو سنجیدہ نہ لینےپر سخت برہمی کا اظہار کرتے ہوئےافسران کے خلاف کاروائی کا فیصلہ کیا، وزیر اعظم نے  تمام وزراتوں،محکموں اور اداروں کو جائزہ رپورٹ جمع کروانے کا حکم بھی دیا جبکہ مزید تحقیقات کے لئے وزارتوں اور محکموں میں 5 رکنی کمیٹی بنانے کا فیصلہ بھی کیا گیا ہے، کمیٹی کی سربراہی 20 گریڈ کا افسر یا جوائنٹ سیکرٹری کرے گا۔

وزیر اعظم آفس کے مطابق  کمیٹی متعین افسران کے ڈیش بورڈ کی جانچ پڑتال کر کے رپورٹ جمع کروائے گی، کمیٹی اب تک کی تمام حل اور غیر حل شدہ شکایات میں خامیوں کی نشاندہی کرے گی، کمیٹی بدترین کارکردگی کے ذمہ داران کا تعین بھی کرے گی، تمام وزارتوں اور محکموں کی کمیٹیاں30 روز میں وزیر اعظم کو رپورٹ پیش کریں گی، شہریوں کی شکایات گائیڈ لائن کے مطابق حل کیے بغیر بند کی جا رہی ہیں۔

وزیر اعظم آفس نے انکشاف کیا کہ شکایات کا حل افسران بالا کی بجائے ماتحت اہلکاروں کے سپرد کیا جا رہا ہے، افسران کے پاس شکایات کے حل کا کوئی دستاویزی ثبوت نہیں ہوتا، شکایات کے حل کا فیصلہ غیر متعلقہ افراد کرتے ہیں،شہریوں کو ردعمل دینے میں غیر ضروری وقت ضائع کیا جاتاہے.

ریلیف نہ کیے جانے کی ٹھوس وجوہات نہیں بتائی جاتی،جن شکایات پر ریلیف دیاگیا وہاں بھی صورتحال مختلف تھی،منفی فیڈ بیک کی روشنی میں سپروائزری سطح پر شکایات دوبارہ نہیں کھولی جاتی، شکایات کے حل کا بیان اکثر گمراہ کن ہو تا ہے۔