امریکی صدر کی اپنی بیٹی کیلئے خواہش

امریکی صدر کی اپنی بیٹی کیلئے خواہش


واشنگٹن( 24نیوز ) اقوام متحدہ میں امریکی مندوب نکی ہیلی نے استعفیٰ دے دیا ہے جبکہ امریکی صدر اپنی لاڈلی بیٹی ایوانکا ٹرمپ کو اقوام متحدہ میں امریکا کی مستقل مندوب بنانے کے خواہش مند ہیں مگر ایوانکا ٹرمپ کے ارادے کچھ اور ہیں ،دوسری طرف نکی ہیلی نے کہا ہے کہ وہ امریکی صدر کا مقابلہ نہیں کرنا چاہتیں۔


امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی صاحبزادی ایوانکا ٹرمپ نے اپنی ٹوئٹ میں کہا ہے کہ وائٹ ہاﺅس میں بہت اچھے معاونین کے ساتھ کام کرنا انکے لیے فخر کی بات ہے اور انہیں یقین ہے کہ صدر ٹرمپ اقوام متحدہ کی مستقل مندوب کے لیے کسی مضبوط نام کا انتخاب کریں گے تاہم وہ متبادل میں نہیں ہوں۔
نکی ہیلی کے استعفیٰ کے بعد امریکی صدر کا بیان منظر عام پر آیا جس میں انہوں نے کہا ایوانکاٹرمپ اقوام متحدہ میں ڈائنامائیٹ ثابت ہوسکتی ہیں،جانتاہوں کہ ایوانکاٹرمپ کانام لینےپراقرباپروری کاالزام لگایاجائےگا، اور اب ایوانکا ٹرمپ نے واضح کر دیا ہے کہ وہ اقوام متحدہ میں امریکا کی مستقل مندوب بننے کی خواہش نہیں رکھتیں۔
استعفے کے بعد نکی ہیلی کا کہنا ہے صدارتی انتخابات میں ٹرمپ کا مقابلہ کرنے کا ارادہ نہیں، اوول آفس میں ٹرمپ کے ساتھ انہوں نے صحافیوں کو بتایا کہ عالمی ادارے میں امریکا کی نمائندگی کے اٹھارہ ماہ ان کے لیے انتہائی اہم رہے اور وہ رواں سال کے اختتام تک اس عہدہ پر براجمان رہیں گی، 46 سالہ ہیلی حکمران پارٹی ری پبلکن کی حامی ہیں، وسط مدتی الیکشن سے قبل ہیلی کے اس عہدے سے الگ ہونے کے فیصلے کو ٹرمپ انتظامیہ کے لیے ایک اور دھچکا قرار دیا جا رہا ہے۔