آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس میں اسحاق ڈار اشتہاری قرار

آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس میں اسحاق ڈار اشتہاری قرار


اسلام آباد (24نیوز) آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس میں اسحاق ڈار کو اشتہاری قرار دے دیا گیا، ضامن کو تین دن میں مچلکے جمع کرانے کا حکم دے دیا۔ مچلکے جمع نہ کرانے پر جائیداد ضبطگی کی کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔ 

ذرائع کے مطابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار کیخلاف آمدن سے زائد اثاثے بنانے کے حوالے سے ریفرنس کی سماعت احتساب عدالت کے جج محمد بشیر نے کی. پراسیکیوٹر نیب عمران شفیق نے عدالت سے عدم حاضری پر اسحاق ڈار کو اشتہاری قرار دینے کی استدعا کی، وکیل صفائی کی جانب سے نئی میڈیکل رپورٹ عدالت میں جمع کرائی گئی۔ وکیل صفائی کا کہنا تھا کہ اسحاق ڈار کے مزید ٹیسٹ ہونا ضروری ہیں، اسحاق ڈار کی ایم آر آئی کا انتظار تھا، سینے میں اب بھی تکلیف ہے۔

اس موقع پر اسپیشل پراسیکیوٹر نیب عمران شفیق نے عدالت کے روبرو کہا کہ اسحاق ڈار کو دل کی کوئی تکلیف نہیں، اسحاق ڈار کی ہر میڈیکل رپورٹ دوسری سے مخلتف ہے، اسحاق ڈار کو اشتہاری قرار دیا جائے۔ عدالت نے اسےدعا منظور کرتے ہوئے اسحاق ڈار کو اشتہاری قرار دینے کا فیصلہ سنایا، عدالت نے اسحاق ڈار کو اشتہاری قرار دیتے ہوئے ضامن کو تین دن میں مچلکے جمع کرانے کی ہدایت کردی۔

عدالت نے احکامات جاری کئے کہ ضابطہ فوجداری کی دفعہ 512 کے تحت ملزم کی عدم حاضری پر ٹرائل آگے بڑھائین گے.عدالت نے اسحاق ڈار خلاف 14 دسمبر کو شہادتیں طلب کرلیں،عدالت کے فیصلے کے مطابق اگر ضامن نے تین دن میں مچلکے جمع نہ کرائے تو جائیداد ضبط کرنے کی کارروائی کی جائے گی۔

ویڈیو دیکھیں: