این اے 154 انتخابی معرکہ: کوریج کیلئے 24 نیوز کی سب سے بڑی ٹیم سرگرم

این اے 154 انتخابی معرکہ: کوریج کیلئے 24 نیوز کی سب سے بڑی ٹیم سرگرم


لاہور ( 24 نیوز ) این اے 154 کے سب سے بڑے انتخابی معرکے کی کوریج کے لئے 24 نیوز کی سب سے بڑی ٹیم سرگرم ہو گئی، 24 نیوز کے 100 سے زائد افراد پر مشتمل کوریج ٹیم انتخابی معرکے کی پل پل کی خبر آپ تک پہنچائے گی۔

تفصیلات کے مطابق 24 نیوز کے 100 سے زائد افراد پر مشتمل کوریج ٹیم انتخابی معرکے کی پل پل کی خبر آپ تک پہنچائے گی۔ 30 سے زائد رپورٹرز، 30 سے زائد کیمرہ مین ٹیم میں شامل۔ 24 نیوز کی 4 ڈی ایس این جیز، 5 ٹیرا اور ڈروں کیمرے کوریج کیلئے تیار۔

جنوبی پنجاب میں سب سے بڑا معرکہ، پی ٹی آئی کے علی ترین اور ن لیگ کے پیر اقبال شاہ میں کاٹنے کا مقابلہ کل ہو گا۔ حلقہ این اے 154 کا منفرد اعزاز، تیسری بار الیکشن ہوں گے۔

این اے 154 لودھراں میں حالیہ ٹنیور کے آخری ضمنی الیکشن کا میدان سج گیا۔ نون اور جنون آمنے سامنے ہیں۔ پی ٹی آئی نے جہانگیر ترین کے بیٹے علی ترین کو میدان میں اتارا۔ علی ترین لندن میں آکسفورڈ یونیورسٹی سے ایم بی اے کی ڈگری ہولڈر ہیں۔

ان کے مدمقابل ن لیگ کے سینئر رہنما اور ایم پی اے عامر اقبال کے والد اقبال شاہ ہیں۔ پیپلزپارٹی کے امیدوار مرزا محمد علی بیگ سابق وفاقی وزیر ناصر بیگ کے بیٹے بھی میدان میں ہیں۔

حلقے کی اہم شخصیت صدیق خان بلوچ کے رویے کو دیکھتے ہوئے ن لیگ نے اقبال شاہ کو ٹکٹ دی۔ کانجو، بلوچ، نون خاندان بھی اس الیکشن میں اپنے حمایتی امیدواروں کے لئے ایڑی چوٹی کا زور لگائیں گے۔ صرف یہی نہیں اس حلقے میں گیلانی، قریشی، کھچی، ترین، مخدوم وڈیرے بھی سرگرم ہیں۔

دو ہزار تیرہ کے انتخابات میں آزاد امیدوار جنہوں نے بعد میں ن لیگ میں شمولیت اختیار کی صدیق خان بلوچ نے جہانگیر ترین کے مقابلے میں کامیابی حاصل کی۔ الیکشن ٹربیونل نے اس انتخابی نتیجے کو کالعدم قرار دیتے ہوئے دوبارہ انتخابات کا حکم دیا تو جہانگیر ترین کامیاب قرار پائے۔ اب جہانگیر ترین کی سپریم کورٹ سے نااہلی کے بعد ایک بار پھر ضمنی الیکشن ہونے جا رہے ہیں۔