رحیم یار خان میں ٹرین حادثہ، 11 افراد جاں بحق، 70 سے زائد زخمی



رحیم یار خان (24نیوز) لاہور سے کوئٹہ جانے والی اکبر ایکسپریس رحیم یار خان ولہار اسٹیشن کے قریب کھڑی مال گاڑی سےجا ٹکرائی۔حادثے میں 11 افراد جاں سے گئے۔70 سے زائدد زخمی ہوگئے۔وزیراعظم اور وزیرریلوے نے واقعہ پر اظہار افسوس کیا۔

حادثے کے نتیجے میں ٹرین کا انجن مکمل طور پر تباہ ہوگیا۔ چاربوگیاں الٹیں جبکہ سات کو نقصان پہنچا۔ ریسکیو عملے کی جانب سے تمام لاشوں اور زخمیوں کو جناح اور شیخ زائد اسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔ 

وزیر اعظم عمران خان نے ٹرین حادثہ پر اظہار افسوس کیا ۔ انہوں نے اپنے ٹویٹ میں لواحقین سے دلی ہمدردی کا اظہار کیا اور وزیرریلوے شیخ رشید کو ہدایت کی  کہ دہائیوں سے نظر انداز ریلوے انفراسٹرکچر میں ہنگامی بنیادوں پر اقدامات کئے جائیں۔

وزیرریلوےشیخ رشید نے حادثہ انسانی غلطی قراردےدیا۔ جاں بحق افراد کے لواحقین کو9،9لاکھ جبکہ شدیدزخمیوں کو پانچ لاکھ روپے دینےکااعلان کیا۔کم زخمی افرادکو دو،دولاکھ روپے دیئے جائیں گے۔

ڈپٹی کمشنررحیم یارخان جمیل احمد جمیل کے مطابق حادثہ سگنل تبدیل نہ کرنے کی وجہ سے پیش آیا ہے۔ مسافروں کو بسوں کے ذریعے منزل مقصود پرپہنچایا جائے گا۔ڈی پی اورحیم یارخان عمرسلامت نے زخمیوں کےلیے خون کےعطیات کی اپیل کی ہے۔کہتے ہیں زخمیوں کو نکال لیا گیا ہے۔ تین سے چار افراد کی حالت تشویشناک ہے۔

عینی شاہدین کے مطابق حادثہ کانٹا تبدیل نہ کرنے کی وجہ سے پیش آیا ہے۔ حادثے کےوقت متعدد مسافر سورہےتھے۔

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔