پاکستان کا امریکہ کو کرارا جواب، امریکی سفارتکاروں پر نئی پابندیوں کا اعلان


اسلام آباد (24 نیوز) ادلے کا بدلہ، امریکہ میں پاکستانی سفارت کاروں پر نقل و حمل پر پابندی کے بعد پاکستان کا بھی امریکا کو کرارا جواب۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان میں امریکی اتاشی نے شہر اقتدار میں نوجوان کو اپنی گاڑی سے کچل دیا تھا جس کے بعد نوجوان تاب نہ لاتے ہوئے جاں بحق ہو گیا تھا۔ بعد ازاں پاکستان کی جانب سے مختلف پابندیوں کا اعلان کیا گیا۔ ان پابندیوں کو مد نظر رکھتے ہوئے امریکہ نے بھی پاکستانی سفارتکاروں پر پابندیوں کا اعلان کیا۔

ان پابندیوں کے خلاف پاکستان کی جانب سے آواز اٹھائی گئی اور مختلف طریقہ ہائے کار سے ان کے خلاف احتجاج بھی کیا گیا۔ لیکن امریکہ ٹس سے مس نہ ہوا اور پاکستانی سفارتکاروں پر پابندیاں نہ ہٹائیں۔اس امریکی اقدام پر پاکستان نے  بھی کرارا جواب دیا ہے۔ پاکستانی ایئرپورٹس پر امریکی سفارت کاروں کی تلاشی اور اسکیننگ ہو گی۔ اضافی سہولیات واپس لینے کا بھی اعلان کر دیا گیا ہے۔ کالے شیشے والی گاڑیاں استعمال نہیں کر سکیں گے۔

یہ بھی پڑھیں: امریکہ نے پاکستان پر نئی سفارتی پابندیوں کا فیصلہ کر لیا 

امریکی سفارتکاروں پر عائد کردہ پابندیوں میں یہ بھی شامل ہو گا کہ امریکی سفارتکار نان ڈپلومیٹک نمبر پلیٹ والی گاڑیاں بھی استعمال نہیں کر سکیں گے۔اس حوالے سے 27اپریل کو ملاقات میں امریکی سفارتخانے کو آگاہ کردیا گیا۔ وزارت خارجہ نے اپنے خط میں امریکی سفارتکاروں پر محدود پابندیاں عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکی سفارتکاروں کی دی گئی خصوصی سہولیات واپس لی جارہی ہیں۔

امریکی سفارتکاروں کوبھی نقل وحمل سے پہلے اجازت لینا ہوگی، امریکی سفارتکار کالے شیشے والی گاڑیاں استعمال نہیں کرسکیں گے،زیر استعمال گاڑیوں پر اصلی نمبر پلیٹ لگانا لازمی ہوگا، امریکی سفارکاری کرائے کی گاڑیون پر ڈپلومیٹ نمبر پلیٹ استعمال نہیں کر سکیں گے، امریکی سفارتکاروں کے لیے بائیومیٹرک تصدیق کے بغیر فون سمز جاری نہیں کی جائیں گی۔

پڑھنا نہ بھولیں: بزدل بھارتی آرمی چیف کے مکروہ عزائم بے نقاب ہو گئے 

کرایہ پر لی گئی گاڑیوں پر ڈپلومیٹک نمبر پلیٹ کی اجازت بھی نہیں ہوگی۔کرایہ کی عمارتوں کے حصول اور تبدیلی کے لیے این او سی لینا ہوگا۔سیف ہاؤسز اورسفارتکاروں کی رہائش گاہوں پر مواصلاتی آلات لگانے کے لیے این او سی درکار ہوگی، امریکی سفارتکار ایک سے زائد پاسپورٹ نہیں رکھ سکیں گے۔ امریکی سفارتکاروں کا قیام جاری کیے گئے ویزے کی مدت کے مطابق ہوگا۔

تمام پاکستانی ایئرپورٹس پر امریکی سفارتکاروں کے سامان کے لیے دی گئی چھوٹ بھی واپس لے لی گئی ہے۔ایئرپورٹس پر آنے والے سامان کی قواعد و ضوابط کے مطابق اسکریننگ اور چیکنگ ہوگی، پاکستانی ائرپورٹس پر امریکی سفارتخانے کے سامان کی ترسیل کو ویاناکنونشن کے مطابق ڈیل کیا جائے گا۔ وزارت خارجہ نے اپنے خط میں ہدایت کی ہے کہ امریکی سفارتکار پاکستانی اعلیٰ حکام اور غیر ملکی سفارتکاروں سے قواعد کے مطابق ملاقاتیں کریں۔