حکومتی کمیٹی گیس تلاش کرے گی

حکومتی کمیٹی گیس تلاش کرے گی


اسلام آباد(24نیوز) حکومت نے سوئی سدرن اور سوئی ناردرن کوگیس بحران کاذمہ دارقراردے دیا۔ وزیراعظم نے چاررکنی کمیٹی بناکر72گھنٹے میں رپورٹ طلب کرلی۔

وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت ملک میں گیس بحران سے متعلق اجلاس میں وفاقی وزیر پیٹرولیم غلام سرور خان نے حالیہ گیس بحران پر تفصیلی بریفنگ دی۔بریفنگ میں بتایاگیا کہ گیس کے حالیہ بحران کی ذمہ داری ایس این جی پی ایل اور ایس ایس جی سی پرعائد ہوتی ہے، دونوں کمپینوں نے گیس کمپریسر پلانٹس کی خرابی سے متعلق معلومات کو حکومت سے پوشیدہ رکھا، دسمبر کے مہینے میں گیس کی طلب کے حوالے سے تخمینہ سازی میں بھی غفلت اور نااہلی کا مظاہرہ کیاگیا۔

وزیراعظم عمران خان نے نااہلی کا مظاہرہ اور معلومات پوشیدہ رکھنے کا سخت نوٹس لیتے ہوئے دونوں کمپنیوں کے مینجنگ ڈائریکٹرز کے خلاف فوری انکوائری کا حکم دے دیا، وزیراعظم نے وزیر پیٹرولیم کو ہدایت کی کہ دونوں کے خلاف آئندہ 72گھنٹوں میں کارروائی مکمل کرکے رپورٹ پیش کی جائے۔ وزیراعظم نے گیس بحران سے متعلق ذمہ داروں کے تعین کیلیے چیرپرسن اوگرا کی سربراہی میں چار رکنی کمیٹی تشکیل دے دی، کمیٹی آر ایل این جی کی سپلائی، فرنس آئل اور گیس لوڈمینجمنٹ سے متعلق بھی رپورٹ مرتب کرے گی۔

وزیراعظم نے ہدایت کی کہ گیس کی طلب و رسد اورصارفین کو گیس کی فراہمی کے حوالے سے منصوبہ بندی کو مزید مربوط کیا جائے، ایسی حکمت علی بنائی جائے تاکہ مستقبل میں کسی ایسی دقت کا سامنا نہ کرنا پڑے۔

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔