جج ارشد ملک کو ہٹانے کا فیصلہ،ن لیگ کا بڑا مطالبہ سامنے آگیا

جج ارشد ملک کو ہٹانے کا فیصلہ،ن لیگ کا بڑا مطالبہ سامنے آگیا


اسلام آباد(24نیوز)احتساب عدالت کے جج ارشد ملک کو ہٹائے جانے کے بعد مسلم لیگ ن میدان میں آگئی،ن لیگی رہنمائوں نے بڑا مطالبہ کردیا ۔

ویڈیو اور اس سے جڑے تمام حقائق سچ ثابت ہوگئے:شہباز شریف

مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف نے کہا کہ ویڈیو اور اس سے جڑے تمام حقائق سچ ثابت ہوگئے ہیں،سچائی ثابت ہونے پر اللہ تعالی کا شکر ادا کرتے ہیں، نوازشریف کو جیل میں ایک منٹ بھی رکھنا اب غیر قانونی ہے، جج کے منصب سے ہٹنے کے بعد نوازشریف کو فی الفور رہا کیا جاۓ، احتساب عدالت کے جج کو ہٹانے کے بعد نواز شریف کے خلاف فیصلہ کالعدم ہو چکا ہے۔

مسلم لیگ ن کی ترجمان مریم اورنگزیب نے 24نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ میاں نواز شریف پر بے بنیاد الزامات ہیں اب ان کو جیل میں رکھنا مناسب نہیں،ان کو فوری رہا کیا جائے۔

پنجاب اسمبلی میں ن لیگ کی ارکان اسمبلی نے مسلم لیگ ن نے سابق وزیراعظم نواز شریف کی رہائی کا مطالبہ کردیا۔عظمٰی بخاری نے کہا ہے کہ جج ارشد ملک کو عہدے سے ہٹانا مسئلے کا حل نہیں۔ جج کو عہدے سے ہٹانا یہ تسلیم کرنا ہے کہ جج صاحب غیر آئینی اقدام کے مرتکب ہوئے ہیں۔

انہوں نے کہا ہے کہ جج کو عہدے سے ہٹانے سے یہ ثابت ہوگیا ہے کہ سابق وزیراعظم نواز شریف کو دباؤ کے تحت سزا سنائی گئی ، جب تک نواز شریف کو دی گئی سزا ختم نہیں ہوتی، انصاف کے تقاضے پورے نہیں ہوں گے۔ جج کو ہٹانا پہلا قدم ہے تاہم اس معاملے کی شفاف تحقیقات کی جائیں۔

انہوں نے کہا کہ حقائق سامنے آنے پر ثابت ہوگیا ہے کہ نواز شریف غلط سزا کاٹ رہے ہیں۔ اب یہ واضع ہوچکا ہے کہ نواز شریف بے گناہ جیل میں قید ہیں۔ کسی بھی بے گناہ شخص کو جیل میں قید رکھنا انصاف کے قتل کے مترادف ہے۔

اظہر تھراج

Senior Content Writer