12اکتوبر، ن لیگ کیلئے سیاہ دن لیکن قیادت خاموش کیوں؟

12اکتوبر، ن لیگ کیلئے سیاہ دن لیکن قیادت خاموش کیوں؟


اسلام آباد( 24نیوز )بارہ اکتوبر1999 کوملک میں چوتھا مارشل لا لگا، نوازشریف کی منتخب حکومت پر شب خون مارنے والے دن ن لیگ پراسرار طور پر خاموش رہی، نوازشریف خاموش رہے، مریم نواز اور ان ٹوئٹر اکاونٹ بھی خاموش رہا، اس خاموشی کی وجہ کیا ہے، کہیں نوازشریف نے ڈیل تو نہیں کر لی؟

بارہ اکتوبرکادن بھی گزرگیا لیکن ن لیگ کی صف میں کئی دن سے چھائی پراسرارخاموشی ختم نہیں ہوئی۔بارہ اکتوبر 1999 کو نوازشریف کی جمہوری حکومت ختم ہوئی اور پرویز مشرف ملک کے سیاہ و سفید کے مالک بنے۔  ن لیگ ہر سال بارہ اکتوبر کو یوم سیاہ کے طور پر مناتی ہے لیکن اس بار بارہ اکتوبرکو ن لیگ خاموش رہی۔  نہ یوم سیاہ منایا نہ مذمتی بیان جاری کیا، نہ احتجاج کیا نہ مظاہرے ہوئے۔ ن لیگ کی اس پراسرار خاموشی کی آخر وجہ کیا ہے ؟

اور تو اور جمہوریت اور سیاسی بالادستی کےعلمبردار اور دعوے دارنوازشریف بھی خاموش رہے۔ ٹوئٹر کوئین مریم نواز بھی خاموش رہیں، ان کا ٹوئٹر اکاونٹ تو 24 جولائی سےغیر فعال ہے ۔ اس کے بعد الیکشن ہوا، عمران خان وزیراعظم بنے یہی نہیں بلکہ ان کے چچا شہبازشریف گرفتار ہوئے لیکن جمہوریت پسند بھتیجی نےاس پر بھی صدائے احتجاج بلند نہیں کیا ۔

لیگی حلقوں میں یہ خاموشی کسی طوفان کا پیش خیمہ ہےیا مصلحت کا تقاضہ، یا پھر خوف اور سیاسی تنہائی کے شکار نوازشریف نے ڈیل کر لی ہے؟ بات جو بھی ہے، خاموشی کی پراسراریت ختم ہونی چاہئے ۔

وقار نیازی(Waqar Niazi)

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔