عالمی عدالت نے امریکی فوجیوں کیخلاف تحقیقات کی درخواست کا فیصلہ سنا دیا

عالمی عدالت نے امریکی فوجیوں کیخلاف تحقیقات کی درخواست کا فیصلہ سنا دیا


دی ہیگ( 24نیوز ) عالمی عدالت انصاف نے امریکی فوجیوں کے خلاف افغانستان میں جنگی جرائم سے متعلق تحقیقات کی درخواست مسترد کردی۔

تفصیلات کے مطابقہالینڈ کے شہر دی ہیگ میں واقع عالمی عدالت برائے انصاف کے ججوں نے امریکی فوجیوں کے خلاف افغانستان میں جنگی جرائم سے متعلق تحقیقات کی درخواست مسترد کردی،  ہیگ میں آئی سی سی کے اعلامیے میں کہا گیا کہ ججز نے فیصلہ کیا کہ افغانستان کی موجودہ صورتحال میں تحقیقات انصاف کے مفاد میں نہیں ہوگی، ججز کا کہنا تھا کہ محدود وسائل کی وجہ سے عدالت کو اپنے وسائل ترجیحات کی بنیاد پر صرف کرکے بہتر نتائج درکار ہوتے ہیں۔

دوسری جانب انسانی حقوق کے گروپ نے عالمی عدالت کے فیصلے کو تنقید کا نشانہ بنایا اور خبردار کیا کہ عدالتی فیصلے سے دنیا میں جرائم کے مرتکب افراد کی حوصلہ افزائی ہوئی،انہوں نے کہا کہ ججز کا فیصلہ افغان جنگ میں جاں بحق ہزاروں خاندانوں کے لیے مایوسی کا لمحہ ہے، آئی سی سی کے پراسیکیوٹرز نے 2006 میں افغانستان کے اندر جنگی جرائم اور انسانیت کے خلاف جرائم سے متعلق ابتدائی تحقیقات کا آغاز کیا،بعدازاں 2017 میں چیف پراسیکیوٹر فیٹو بین سودا نے عالمی عدالت کے ججز سے مکمل تحقیقات کا مطالبہ کیا تھا۔