نواز شریف اور ساتھی محفوظ،عمران خان پھنس گئے


اسلام آباد(24نیوز)سیاستدان اپنی تقاریر میں عوام کو جذباتی کرنے میں اپنا ثانی نہیں رکھتے،کبھی کبھی تو ایسی بات کرجاتے ہیں جو ان کیلئے وبال جان بن جاتی ہے۔
سپریم کورٹ آف پاکستان سمیت دیگر عدالتوں میں چلنے والے مقدمات کی خبریں موجود ہیں،عدالتیں ہمیشہ سزائیں ہی نہیں دیتیں بلکہ کبھی کبھی تنبہیہ کرکے چھوڑ بھی دیتی ہیں، سپریم کورٹ میں توہین عدالت کے حوالے سے مختلف مقدمات کی سماعت کی گئی ۔

یہ بھی پڑھئے: میاں شہباز شریف بلا مقابلہ ن لیگ کے پارٹی صدر منتخب
درخواست گزار نے موقف اپنایا کہ سعد رفیق نے اپنے بیانات میں توہین عدالت کی، اس پر چیف جسٹس نے کہا کہ ہمیں بظاہر توہین عدالت کی بات نہیں لگی، عدلیہ کو بلکل غیرجانبدار ہونا چاہیے، جن معاملات پر نوٹس لینا تھا لے چکے ہیں،درخواست گزار کے وکیل نے دلائل میں کہا کہ ہم عمران خان کے خلاف کیس کو چلانا چاہتے ہیں، اس پر چیف جسٹس نے چیئرمین تحریک انصاف کے خلاف درخواست کو دوبارہ سماعت کے لیے مقرر کرنے کا حکم دے دیا۔

ضرور پڑھئے:صادق سنجرانی چیئرمین، سلیم مانڈوی والا ڈپٹی چیئرمین سینیٹ منتخب, حلف اُٹھا لیا
درخواست گزار نے کہا کہ نہال ہاشمی نے بھی توہین عدالت کی، اس پر جسٹس اعجاز الاحسن نے مکالمہ کیا کہ نہال ہاشمی کو سزا ہوچکی اور پھر توہین عدالت کا نوٹس جاری چکا ہے، سپریم کورٹ میں چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان کے خلاف توہین عدالت کیس کی سماعت ہوئی، عدالت نے نوازشریف، کیپٹن (ر) صفدر اور خواجہ سعد رفیق ،دانیال عزیزکے خلاف توہین عدالت کی درخواستیں خارج کردیں جبکہ سپریم کورٹ نے چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کے خلاف توہین عدالت کی درخواست دوبارہ سماعت کے لیے مقرر کرنے کا حکم دے دیا۔

اظہر تھراج

صحافی اور کالم نگار ہیں،مختلف اخبارات ،ٹی وی چینلز میں کام کا وسیع تجربہ رکھتے ہیں