100روپے کم کیوں دیئے، ٹریفک وارڈن کا شہری پر وحشیانہ تشدد

100روپے کم کیوں دیئے، ٹریفک وارڈن کا شہری پر وحشیانہ تشدد


کراچی ( 24 نیوز ) شہر قائد میں ٹریفک پولیس کی بدمعاشی ، عید سے قبل شہری پر وحشیانہ تشدد ، صرف 100 روپے کم دینے کے چکر میں ٹریفک پولیس اہلکاروں نے ایس او کھارادر کی سرپرستی میں شہری کی کھال اتار دی۔

24 نیوز کے مطابق کراچی میں ٹریفک پولیس نے عیدی مہم کے لیے ساری حدیں پار کر دیں، کھارادر ٹریفک سیکشن نے شہری پر وحشیانہ تشدد کی مثال قائم کر دی۔متاثرہ شہری کے بھائی نے موقف اپنایا کہ ایس او کھارادر سمیت 8 اہلکاروں نے میرے بھائی کی کھال اتاردی، میرے بھائی نے کل کھارادر میں موٹر سائیکل پارک کی اور سامان لینے گیا، واپس آ کر دیکھا تو موٹر سائیکل نہیں تھی۔

یہ بھی پڑھیں: سیاسی رہنما ’عید‘ کیسے مناتے ہیں؟ 

ٹریفک سیکشن میں موٹرسائیکل دیکھی تو اہلکار نے 200 روپے مانگے، میرے بھائی نے 100 روپے دے کر موٹرسائیکل لے جانا چاہی، ڈیوٹی انچارج نے پیچھے سے گریبان پکڑا اور پورے دو سو روپے مانگے، پیسے مکمل نہ دینے پر شہری پر بند کمرے میں چھترول کر دی۔ شہری نے نگران وزیرِ اعلیٰ سندھ سے غیر قانونی پارکنگ کی سہولت کار ٹریفک پولیس سے انصاف دلانے کی اپیل کی ہے۔