گلگت بلتستان کو مرکزی دھارے میں شامل کرنے کے حوالے سے سیمینار

11:12 PM, 15 مئی, 2018

احمد علی کیف

اسلام آباد (24 نیوز) پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنماء فرحت اللہ بابر نے کہا ہے کہ گزشتہ 70سالوں میں ریاست گلگت بلتستان کو حقوق دینے میں ناکام ہوچکی ہے، اب وقت آگیا ہے کہ انکی محرومیوں کو مل کر دور کیا جائے۔ 
گلگت بلتستان کو مرکزی دھارے میں شامل کرنے کے حوالے سے شہید بھٹو فاونڈیشن نے نیشنل پریس کلب اسلام آباد میں ایک سیمنار کا انعقاد کیا، جس میں سیاسی و سماجی شخصیات کے علاوہ گلگت بلتستان کے نوجوانوں کی بڑی تعداد نےشرکت کی، سیمنار سے خطاب کرتے ہوئے فرحت اللہ بابر نے گلگت بلتستان کے حوالے سے ریاست کی ناکامی کا اعتراف کیا اور کہا کہ اس وقت جب یہ لوگ ہم سے حقوق مانگ رہے ہیں ہمیں انکی بات مان لینی چاہیئے کہیں ایسا وقت نہ آئے کہ یہ ناراض ہوجائیں اور ہمیں انہیں منانا پڑے۔

یہ بھی پڑھیں: فاٹا کو خیبر پختونخوا میں ضم کرنے کیلئے 30ویں آئینی ترمیم کا فیصلہ 

انسانی حقوق کی کارکن ماروی سرمد نے کہا کہ 1999کے فیصلے میں سپریم کورٹ نے گلگت بلتستان کے شہریوں کو پاکستان کا شہری تسلیم کیا ہے، سپریم کورٹ کی رسائی وہاں تک نہ کرنا ناجائز ہے، گلگت بلتستان کو ایک علیحدہ صوبہ کی حیثیت ملنی چاہیے۔ پاکستان پیپلز پارٹی گلگت بلتستان کے صدر امجد ایڈوکیٹ کا کہنا تھا کہ گلگت بلتستان کو سمجھنے کی ضرورت ہے، ہم 70سالوں سے ووٹ کا حق مانگ رہے ہیں۔ مجھے شرم آتی ہے کہ میں ایک پارٹی کا سربراہ ہوں اور گلگت بلتستان میں محرومیاں ہیں۔

مزیدخبریں