راو انوار وہ بہادر بچہ ہے جو ایم کیوایم سے لڑتے ہوئے بچا: آصف زرداری


کراچی (24 نیوز) سابق صدر اور پاکستان پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ راو انوار وہ بہادر بچہ ہے وہ ایم کیوایم سے لڑتے ہوئے بچا۔

24 نیوز کے پروگرام نسیم زہرہ @ 8، میں خصوصی گفتگو کرتے ہوئے سابق صدر نے کہا کہ جنرل بابر نے 54 ایس ایچ اوز کے خلاف آپریشن کیا تھا جس میں 53 مارے گئے تھے ان میں سے صرف راو انوار بچا تھا۔ اس زمانے میں جب ایم کیو ایم واپس آئی تو وہ دوبارہ انڈر گراؤنڈ ہوگیا۔

نسیم زہرہ کے ایک سوال پر آصف زرداری نے کہا کہ راو انوار پر 444 ماورائے عدالت قتل کرنے کا الزام غلط ہے تو اگر یہ بات سچ ہوتی تو پھر اس کے خلاف اتنی درخواستیں کورٹ میں کیوں نہیں ہیں۔ جس پر نسیم زہرہ نے کہا کہ یہ رپورٹ تو سپریم کورٹ کی ہے۔ سابق صدر نے جواب دیتے ہوئے کہا کہ سپریم کورٹ نے نہیں بلکہ سندھ پولیس نے رپورٹ تیار کی ہے اور آئی جی بھی تو سپریم کورٹ کا لگایا ہوا ہے۔

نسیم زہرہ نے سوال کیا کہ راو انوار کا اس طرح جہاز میں بیٹھ کر فرار ہونا تو ملک کے ساتھ مذاق ہے، جس کا انہوں نے کچھ خاص جواب نہ دیا۔