کراچی میں صاف پانی نایاب ہوگیا

کراچی میں صاف پانی نایاب ہوگیا


کراچی (24نیوز) کراچی کے شہری واٹر بورڈ اور کے الیکٹرک کی نااہلی کی سزا بھگتنے پر مجبور ہوگئے ہیں، بجلی کے بریک ڈاؤن کی وجہ سے دو دن کے دوران دھابیجی پمپنگ سٹیشن پر پائپ لائن پھٹ گئی جس سے کراچی کے بیشتر علاقوں میں پینے کا پانی نایاب ہوگیا۔

کراچی میں کے الیکٹرک اور واٹر بورڈ کی ناہلی کی سزا عوام بھگتنے پر  مجبور ہیں۔ دھابیجی پمپنگ اسٹیشن پر 33 گھنٹے کے دوران بجلی کا دوسرا بریک ڈاؤن ہوگیا ۔ ترجمان واٹر بورڈ کے مطابق بریک ڈاؤن کی وجہ سےلائن پھٹنےسےکراچی کوپانی کی فراہمی مکمل بندہے ۔ 

دو گھنٹےکےدوران دھابیجی پمپنگ اسٹیشن پردوسری مرتبہ بجلی کابریک ڈاؤن ہواجس کی وجہ سے 5 کروڑ گیلن پانی فراہم نہیں کیاجاسکا ۔ پانی کی فراہمی معطل ہونے کے باعث شہر بھر کے مختلف علاقوں میں پانی کا بحران شدت اختیار کرگیا ۔ شاہ فیصل کالونی، ملیر، گلستان جوہر، کورنگی، بلدیہ ٹاؤں، لیاری و دیگر علاقوں میں پانی نایاب ہوگیا۔ پانی کی عدم دستیابی کے باعث شہری پانی خریدنے پر مجبور ہیں۔ 

ترجمان واٹر بورڈ کا کہنا ہے بریک ڈاؤن کے باعث دھابیجی پمپنگ اسٹیشن کی متاثر ہونے والی لائن کا مرمتی کام جاری ہے جبکہ شہر کو متبادل ذرائع سے پانی فراہم کیا جارہا ہے ۔

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔