گیس کی قیمت میں 47 فیصد اضافے کی سفارش

گیس کی قیمت میں 47 فیصد اضافے کی سفارش


اسلام آباد(24 نیوز) اوگرانے آئندہ مالی سال کیلئےگیس کی قیمت میں 47 فیصد اضافے کی سفارش کر دی، گیس کمپنیوں کا ٹیرف 236 روپے فی ایم ایم بی ٹی یو تک بڑھادیا گیا، صارفین کے سلیبزبھی تبدیل ہوگئے۔

 اوگرانے یکم جولائی سے گیس کی اوسط قیمتوں میں 47 فیصد تک اضافے کی سفارش کر دی، سوئی سدرن کےصارفین کیلئےٹیرف 236 روپےاورسوئی ناردرن کیلئے159 روپے فی ایم ایم بی ٹی یو اضافہ کیا جائے گا۔ اوگرا نے گھریلو صارفین کے ابتدائی 2 سلیبز کیلئے گیس 65 فیصد،  تیسرے سلیب کیلئے 43 فیصداور چوتھے سلیب کیلئے 50 فیصد مہنگی کرنے کی سفارش کی گئی ہےجبکہ پانچویں اورچھٹے سلیب کیلئے گیس 25تا 47فیصد سستی کرنے کی سفارش کی گئی ہے۔

گیس صارفین کی سلیبزبھی سات سےکم کرکے 6 کر دی گئیں جس کے مطابق1.90ایم ایم بی ٹی یوکابل 274 سےبڑھ کر789 روپے اور3.80 ایم ایم بی ٹی یو ماہانہ استعمال کا بل 550 سے بڑھ کر 1555 روپے کرنے کی سفارش کی گئی ہے۔ 4.18 سے7.60ایم ایم بی ٹی یو استعمال کرنے والوں کا بل 1777 سے3854 روپے کے درمیان کرنےکی تجویز ہے۔

اوگرا کے مطابق ڈالرکےمقابلےمیں روپے کی قدر میں کمی بھی گیس قیمتوں میں اضافے کی ایک وجہ ہے، ترجمان اوگرا کے مطابق گیس کی قیمتوں میں اضافے کا حتمی فیصلہ وفاقی حکومت کی منظوری کے بعد ہو گا۔