انتخابات کو خطرہ الیکشن کمیشن کی بڑی ناکامی سامنے آگئی

انتخابات کو خطرہ الیکشن کمیشن کی بڑی ناکامی سامنے آگئی


اسلام آباد( 24نیوز ) عام انتخابات میں صرف چھ دن باقی ہیں لیکن عدالتوں میں دائراپیلوں کا بروقت فیصلہ نہ ہونے سے سو کے قریب حلقوں میں بیلٹ پیپرز کی چھپائی شروع نہیں ہوسکی،جس نے الیکشن کے لئے خطرے کی گھنٹی بجا دی ہے۔

وقت کم،مقابلہ سخت، الیکشن میں صرف چھ دن رہ گئے ہیں لیکن 100 کے قریب حلقوں کےبیلٹ پیپرز کی چھپائی ابھی تک شروع نہیں ہوسکی،وجہ اس کی یہ ہے کہ ان حلقوں سے متعلق کیسز عدالتوں میں زیر سماعت ہیں ،مخالفین کے اعتراضات اورامیدواورں کی اپیلوں پرفیصلہ جو بھی آئے لیکن اس نے 25 جولائی کےانتخابات پر تلوار لٹکا دی ہے۔

سیاسی جماعتیں ناکام،نوجوان اپنا امیدوار میدان میں لے آئے

پنجاب کے 22 اور سندھ کے 81 حلقوں کا معاملہ عدالتوں میں ہے،بدھ کو سندھ ہائی کورٹ نے 34 پٹیشنز کا فیصلہ سنایا اس کے باوجود 47 کیسزاب باقی ہیں جبکہ بیلٹ پیپرز کی چھپائی کے لئے صرف دو دن ہیں۔

الیکشن کمیشن حکام کو بھی صورتحال کی نزاکت کا احساس ہے اس سلسلے میں اعلیِ عدلیہ سے جلد فیصلے کرنے کی استدعا کی گئی ہے کمیشن نے اس عزم کا بھی اظہار کیا ہے کہ پولنگ سےایک روز پہلے بھی بیلٹ پیپرزپرنٹ کر لئے جائیں گے،دوسری طرف پاک فوج کی نگرانی میں خیبر پختو نخوا ،پنجاب اوربلوچستان میں بیلٹ پیپرز کی ترسیل کا عمل کافی حد تک مکمل ہو چکا ہے۔