وزیراعطم کی وزرا اور سیکریٹروں کو غیر مُلکی دورے محدود کرنے کی ہدایت

وزیراعطم کی وزرا اور سیکریٹروں کو غیر مُلکی دورے محدود کرنے کی ہدایت


اسلام آباد(24نیوز) وفاقی کابینہ اجلاس کے دوران وزیراعظم کی صدار ت میں ہوا ۔ وزیراعظم نے وفاقی وزرا اور وفاقی سیکرٹریز کو غیرملکی دورے محدود کرنے کے ہدایت جاری کردی ، اجلاس کے دوران وفاقی وزیر خزانہ اور وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری کے درمیان تلخ کلامی بھی ہوئی.

وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس 6 گھنٹے تک جاری رہا اجلاس میں 30 نکاتی ایجنڈے پر غور کیا گیا۔ اجلاس کے دوران وزیراعظم عمران خان نے وزرا کے بیرون ملک دوروں کو محدود کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ وزرا یا سیکرٹری بیرونی دورے انتہائی ناگزیر صورتحال ہی میں کریں.

وفاقی کابینہ کو ملک بھر میں زرعی اصلاحات پر 2 گھنٹے کی بریفنگ دی گئی، زرعی پالیسی پر بریفنگ کے سلسلے میں جہانگیر ترین کو خصوصی دعوت پر اجلاس میں مدعو کیا گیا۔ وفاقی کابینہ نے احتساب کا عمل جاری رکھنے پر اتفاق کیا اور قرار دیا کہ بعض سیاسی رہنماوں کے تنقیدی بیانات ان کے اپنے احتساب کے خوف کا نتیجہ ہے .

کابینہ نے ملائشئین وزیراعظم مہاتیر محمد کا شاندار اور تاریخی استقبال کرنے کا فیصلہ بھی کیا۔ وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ مہاتیر محمد کو ان کی نظرئیے اور کردار کی بدولت یوم پاکستان پر مہمان کے اعزاز کا درجہ دیا ۔

ذرائع کے مطابق کابینہ اجلاس میں وفاقی وزرا اسد عمر اور فواد چوہدری میں تند و تیز جملوں کا تبادلہ بھی ہوا۔ حکومتی موقف کی میڈیا میں کم پذیرائی اور پیپلز پارٹی کے راہنماوں کو جواب نہ دینے پر وزیر خزانہ کی تنقید تلخ کلامی کا باعث بنی۔ فواد چودھری نے تلخ کلامی کو کابینہ میں ہونے والی کئی باتوں کا حصہ قرار دیا۔ 

کابینہ نے حکومتی اداروں کے سربراہان کی تقرری کیلئے کمیٹی قائم کرنے سمیت ایجنڈے کے دیگر نکات کی منظوری بھی دے دی۔

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔