وزیراعظم کے معاون خصوصی سپورٹس ٹاسک فورس سے لاعلم

وزیراعظم کے معاون خصوصی سپورٹس ٹاسک فورس سے لاعلم


اسلام آباد( 24نیوز ) وزیر اعظم عمران خان کی ہدایت پر چیئرمین پی سی بی احسان مانی کی سربراہی میں کھیلوں پر بنائی گئی ٹاسک فورس ہوا ہوگئی، وزیراعظم کے معاون خصوصی نعیم الحق نے نیا انکشاف کر دیا، ان کا کہناتھا کہ ایسی کوئی علیحدہ ٹاسک فورس نہیں ہے۔

 تفصیلات کے مطابق حکومت کے 100 دن پورے ہونے کے قریب ہیں ، اور  وزیراعظم کے معاون خصوصی نعیم الحق کئی معاملات سے بے خبر ہیں ، وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی نعیم الحق نے نیا انکشاف کردیا جبکہ سپورٹس ٹاسک فورس کی تردید کردی،   نعیم الحق کا کہناتھا  کہ سپورٹس کے لیے کوئی ٹاسک فورس علیحدہ سے قائم نہیں کی گئی، ایسی کسی ٹاسک فورس کا وجود ہی نہیں۔

  نعیم الحق کا کہنا تھا کہ احسان مانی جو رپورٹ تیار کر رہے ہیں اس میں تنظیمی ڈھانچے میں خامیوں کی نشاندہی کریں گے، وزیر اعظم کے معاون خصوصی نعیم الحق کا سپورٹس کے لیے الگے وزارت بنانے کی سفارش ضروری نہیں کہ رپورٹ کی ہر سفارش کو حکومت قبول کرے،  ان کا کہناتھاکہ وزیر اعظم سے کہا ہے کہ سپورٹس کے لیے الگ سے وزارت قائم کریں جو صرف کھیلوں کو دیکھیں۔

100 دن ایک علامت ہے کہ ہماری حکومت کیا کیا اقدامات شروع کرے گی؟ یہ نہ سمجھیں کہ 100 دن میں کوئی سونے کی کانیں کھل جائیں گی،  ٹوئنٹی فور نیوز کے  ہاکی پر سوال کہ 100 دن میں قومی کھیل  کے لئے کیا اقدامات کیے ہیں؟ جس پر نعیم الحق جواب گول کرگئے،   نعیم الحق ہاکی کے لیے بھی حکومتی اقدام کے بجائے ہائیر گروپ کے جاوید آفریدی پر انحصار کرنے لگے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہاکی ٹیم کے پاس مالی وسائل کی کمی تھی جاوید آفریدی نے مالی وسائل کی فراہمی کو یقینی بنایا ہے، ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا  کہ جو اقدام حکومت کو کرنا چاہیے وہ جاوید آفریدی کر رہے ہیں، حکومت کا خزانہ خالی ہے، پیسے ہی نہیں کسی چیز کے لیے ملک میں پہلے ہی معاشی بحران ہے۔