سانحہ ساہیوال:کس کو کتنی گولیاں لگیں؟پوسٹمارٹم رپورٹ آگئی



لاہور ( 24نیوز ) سانحہ ساہیوال میں جاں بحق ہونے والے افراد کی پوسٹمارٹم رپورٹ منظر عام پرآگئی۔

ابتدائی رپورٹ کے مطابق کار ڈرائیور ذیشان کو10، خلیل کو13، نبیلہ بی بی کو4 اور 13سال کی بچی اریبہ کو6 گولیاں لگیں،مرنیوالے افراد کی میتیں ورثاکے حوالے کردی گئیں ہیں جس پر لواحقین غم و غصے سے نڈھال ہیں،چونگی امرسدھو پر نعشیں رکھ کر احتجاج کررہے ہیں۔

دوسری جانب ساہیوال واقعے میں ملوث اہلکاروں کو لاہور منتقل کردیا گیا اور انکے خلاف مقدمہ بھی درج کرلیا گیا،جاں بحق افراد کی رہائشگاہ چونگی امر سدھو پرتعزیت کیلئے آنے والوں کی آمد کا سلسلہ جاری ہے۔خلیل کے بھائی کا کہنا ہے کہ کل سے ابتک کسی حکومتی شخصیت نے رابطہ نہیں کیا نہ کوئی زخموں پر مرہم رکھا۔تکلیف اور دکھ میں کوئی داد رسی کیلئے بھی نہیں پہنچا۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز لاہور سے نکلی فیملی بورے والا نہ پہنچ سکی،ساہیوال میں ہی قیامت ٹوٹ پڑی، سی ٹی ڈی اہلکاروں نے گاڑی پر اندھا دھند فائرنگ کردی , گولیاں لگنے سے میاں بیوی سمیت 4 افراد جاں بحق جبکہ گاڑی میں سوار تین بچے بھی زخمی ہوگئے جنہیں بذریعہ ایمبولینس لاہور منتقل کردیا گیا۔عمیر کی ٹانگ میں گولی لگی تھی جبکہ منیبہ شیشہ لگنے سے زخمی ہوئی تھی۔تینوں کی حالت اب خطرے سے باہر بتائی جارہی ہے۔

سی ٹی ڈی کی کارروائی میں زخمی تینوں بچوں کو لاہور کے جنرل ہسپتال میں منتقل کیا گیا جہاں انہیں طبی امداد دی گئی،تینوں بچے خطرے سے باہر ہیں تاہم عمیر ٹانگ میں گولی لگنے کے باعث اور منیبہ گاڑی کے شیشے ٹوٹنے کی وجہ سے زخمی ہونے ہوئی جب کہ 4 سالہ ہادیہ محفوظ ہے جسے گھر بھیج دیا گیا ہے۔

اظہر تھراج

Senior Content Writer