نگران حکومت کی کپتان پر نوازشیں، چار مطالبات پورے کردیئے

نگران حکومت کی کپتان پر نوازشیں، چار مطالبات پورے کردیئے


اسلام آباد(24نیوز) کیا ساری نوازشیں کپتان کے لئے ہیں؟ کیا دوسری پارٹیوں کا بھی کوئی مطالبہ پوراہوگا؟یا نگران حکومت صرف پی ٹی آئی کی بی ٹیم کا کام کرے گی؟تحریک انصاف کے چارمطالبے پورے ہوگئے۔کیا وزیرداخلہ اعظم خان کو بھی ہٹایا جائےگا یا نہیں؟
نگران حکومتوں نے چارج سنبھالا تو لگا کہ وہ غیرجانبدار رہ کرشفاف اور غیرجانبدارالیکشن کا انعقاد یقینی بنائیں گے لیکن لگتا ہے کہ وہ تو اصل کام سے ہٹ کر تحریک انصاف کی بی ٹیم کا کام کرنے لگی ہیں۔ کپتان کے منہ سے نکلا ہر مطالبہ فوری پورا کیاجارہاہے۔نگران حکومتوں نے اب تک جوسب سے زیادہ کام کیا ہے وہ ہیں تحریک انصاف کے چار مطالبے جن کو من و عن پورا کیا گیا ۔پہلا مطالبہ پانی وبجلی پربریفنگ، دوسرا زلفی بخاری کا نام ای سی ایل سے نکالنا، تیسرا چیف سیکرٹریز اورآئی جیز کی تبدیلی ، چوتھا مطالبہ ایڈووکیٹ جنرل پنجاب کی تبدیلی کا تھا۔

یہ بھی پڑھیں:  زلفی بخاری سے متعلق کسی نے فون نہیں کیا، نگران وزیر داخلہ

یہ مطالبات  وہ ہیں جو پورے ہوچکے ہیں مگر بہت سے ابھی بھی پائپ لائن میں ہیں جن پر مرحلہ وار عملدرآمد ہونا باقی ہے ۔ جن میں چیئرمین نادرا کی برطرفی بھی شامل ہے۔مطالبات پورے کیوں نہ ہوں اوپر وفاقی وزیرداخلہ اعظم خان جو کپتان کے وفادار اور انکی فاونڈیشن کے ممبر بورڈ آف گورنرز بیٹھے ہیں۔
کیا وزیرداخلہ اعظم خان کو ہٹایاجائے گا جس کا مطالبہ نہ صرف پیپلزپارٹی نے کیا بلکہ لاہورہائیکورٹ میں چیلنچ بھی کردیا ہے ۔اگراعظم خان کو نہ ہٹایا گیا تو یہ نگران حکومت کی غیرجابنداری پر دھبہ بنا رہے گا ۔

وقار نیازی

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔