”آصف زرداری گرفتار ہوئے تو طوفان آئیگا“


اسلام آباد( 24نیوز ) خواجہ سعد رفیق نے گرفتاری کے بعد قومی اسمبلی میں پہلی دھواں دار انٹری ڈالی، نیب اورحکومت پر کھل کر گرجے برسے۔کہتے ہیں آصف زرداری کی گرفتاری سے ملک میں طوفان آجائے گا،غدار،باغی ،چور اور شرپسند قراردینے کا عمل بند ہونا چاہیے۔

انہوں نے نیب قوانین کو کالا قانون قرار دے دیا -لیگی رہنما بولے کہ ایک محب وطن کی درخوست پرگرفتاری،مدعی نامعلوم ،90 روزہ ریمانڈ اورنہ ختم ہونےوالا ریفرنسزکا سلسلہ، نیب قانون کی غلط مثالیں ہیں، معاملات کو بیلنس کرنے کیلئے حکومتی لوگوں کوگرفتارکیا جائے گا۔

سعد رفیق نے خبردارکیاکہ آصف زرداری کی گرفتاری سے ملک میں طوفانی اورہیجانی کیفیت پیدا ہوگی،ایک دوسرے کے چہرے کالے کرنے اورالزام تراشی کی سیاست کورد کرکے ملکی مفاد کیلئے آگے بڑھا جائے۔غدار،باغی ،چور اور شرپسند قراردینے کا عمل بند ہونا چاہئے۔

خواجہ سعد رفیق نے عدلیہ اوراسٹیبلشمنٹ سے ٹھنڈے دماغ کے ساتھ ملک کی بہتری کیلئے سوچنے کی اپیل بھی کردی،یہ تجویز بھی پیش کی کہ پیپلزپارٹی اورمسلم لیگ ن بیٹھ کرمیثاق جمہوریت کا دائرہ کارتمام سیاسی جماعتوں تک بڑھائیں۔