کراچی کا امن تباہ، ہلاکتیں، ڈکیتیاں معمول

کراچی کا امن تباہ، ہلاکتیں، ڈکیتیاں معمول


  کراچی (24نیوز) امن و امان کی صورتحال ایک بار پھر بگڑنے لگی۔ شہرکے مختلف علاقوں میں فائرنگ سے دو افراد جاں بحق اور چار زخمی ہوگئے۔ قانون نافذ کرنے والے اداروں نے متعدد ملزمان کوگرفتار کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق گلشن حدید نصیر آباد میں دکان پر فائرنگ سے دو افراد جاں بحق ہوگئے۔ پولیس کے مطابق مقتولین کی شناخت عمر اور نواب کے ناموں سے ہوئی ہےکر لی گئی۔ واقعہ ابتدائی طور پر ذاتی دشمنی کا لگتا ہے۔

بفرزون میں پولیس اہلکار کو لوٹنے کی کوشش مہنگی پڑ گئی۔ اسپیل انویسٹی گیشن یونٹ پولیس کے اہلکاروں کی فائرنگ سے ڈکیٹ زخمی۔ پولیس کے مطابق زخمی ڈکیت کو ہسپتال منتقل کردیا گیا۔

پی آئی بی میں ڈکیتی مزاحمت پر فائرنگ ایک شخص زخمی شہریوں نے فائرنگ کرنے والے ڈاکو کو پکڑ لیااور ملزم کی درگت بنانے کے بعد پولیس کے حوالے کردیا گیا۔

قائدآباد پولیس نے اغوا کی کوشش ناکام بنادی۔ ملزم کامران کورنگے ہاتھوں گرفتارکرکے 12 سالہ بچے لقمان کو بچالیا۔

ادھر ایف آئی اے ہیومن ٹریفکنگ سرکل نے کارروائی کرتےہوئے ٹریول ایجنسی کے چیف مینیجرقیصر خان کو گرفتارکرلیا۔ ملزم پر غیر قانونی ٹریول ایجنسی چلانے کا الزام ہے۔

گلشنِ اقبال ، الاصف، ، بفر زون اور دیگر علاقوں میں میں نا معلوم افراد کی فائرنگ سے 5 افراد زخمی ہوگئے جنہیں ہسپتال منتقل کردیا گیا