امپائردھرماسینا نے ورلڈ کپ فائنل میں غلطی کا اعتراف کرلیا

امپائردھرماسینا نے ورلڈ کپ فائنل میں غلطی کا اعتراف کرلیا


لارڈز(24 نیوز) کرکٹ ورلڈکپ ختم ہوگیا لیکن فائنل کا تنازع ہے کہ ختم ہونے کونہیں آرہا، فائنل میچ میں اوورتھروپرانگلینڈکو چھ رنزدینے والے سری لنکن امپائردھرماسینا نے بھی غلطی کا اعتراف کرلیا۔

کرکٹ ورلڈکپ دوہزار انیس کا فائنل کرکٹ تاریخ کا یادگارترین میچ بن گیا، میچ سنسنی خیزہونے کے علاوہ متنازعہ بھی بنا،باؤنڈری کی تعدادپرفیصلے کے علاوہ اوورتھروپرانگلینڈکوچھ رنز ملنے بھی غیرمنصفانہ فیصلہ قرارپایا۔ آخری اوورکی چوتھی گیندپرگپٹل کی تھرو بین اسٹوکس سے ٹکراباؤنڈری پارکرگئی یوں انگلینڈکواوورتھروکے چھ رنز ملے کیونکہ کھلاڑیوں نے دورنزبھاگ کربھی لیےلیکن آئی سی سی کے سابق امپائرسائمن ٹوفل اوردیگرکئی سابق کھلاڑیوں نے اسے امپائرکی نااہلی قراردیتے ہوئے نیوزی لینڈ کیساتھ زیادتی قراردیا اورکہا کہ یہاں چھ کے بجائے پانچ رنزبنتے تھے کیونکہ فیلڈرکے تھروکرتے لمحے بلے بازوں نے ابھی ایک دوسرے کوکراس نہیں کیا تھا۔

باآخر اب میچ کے امپائراورانگلینڈکوچھ رنز دینے والے دھرماسینا نے بھی اپنی غلطی تسلیم کرلی ہے، دھرماسینا کاکہنا ہے کہ اب ٹی وی اسکرین پردیکھ کراپنی غلطی کا احساس ہوتا ہے لیکن میچ کے دوران ان کے پاس ریپلے دیکھنے کی سہولت موجود نہیں تھی جس سے پتہ چل سکتا کہ بلے بازوں نے ایک دوسرے کوکراس نہیں کیا۔

ادھرماسینا کا مزید کہنا ہے کہ انہوں نے چھ رنزدینے سے قبل ٹاکی پرتمام امپائرزسے مشورہ کرنے کے بعد ہی چھ رنز دیے لیکن کسی امپائر نے اس بات کی نشاندہی نہ کی اورسب نے تصدیق کی ہے دورنز مکمل ہوچکے تھے۔