اثاثہ جات ریفرنس کیس، اسحاق ڈار مسلسل عدم حاضری پر مفرور ملزم قرار

اثاثہ جات ریفرنس کیس، اسحاق ڈار مسلسل عدم حاضری پر مفرور ملزم قرار


اسلام آباد(24 نیوز): اسلام آباد کی احتساب عدالت نے اثاثہ جات ریفرنس کیس میں مسلسل عدم حاضری پر اسحاق ڈار کو مفرور ملزم قرار دے دیا، ضامن کو بھی شوکاز نوٹس جاری کر دیا گیا۔ سماعت چار دسمبر تک ملتوی کردی گئی۔

 تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت میں اسحاق ڈار کے خلاف اثاثہ جات ریفرنس کیس کی سماعت ہوئی، عدالت نے اسحاق ڈار کو مفرور ملزم قرار دیتے ہوئے طلبی کے لئے اشتہار جاری کرنے کا حکم دے دیا جبکہ ضامن کو بھی شوکاز نوٹس جاری کر دیا۔

دوران سماعت اسحاق ڈار کے وکیل نے ایک بار پھر میڈیکل کی بنیاد پر حاضری سے استثنٰی دینے کی درخواست اور مقدمے کا ٹرائل اٹارنی کے ذریعے آگے بڑھانے کی استدعا کی۔ نیب نے اسحاق ڈار کی دونوں درخواستوں کی مخالفت کی۔

اسحاق ڈار کے نا قابل ضمانت وارنٹ گرفتاری کی رپورٹ عدالت میں جمع کرا دی جس میں بتایا گیا کہ نیب نے وزیر خزانہ کی لاہور اور اسلام آباد میں رہائشگاہوں پر چھاپے مارے لیکن ملزم اہلخانہ کے ہمراہ بیرون ملک فرار ہو چکا ہے۔

احتساب عدالت نے اسحاق ڈار کی حاضری سے استثنیٰ کی درخواست مسترد کرتے ہوئے وزیر خزانہ کی طلبی کے لئے اشتہار جاری کرنے کا حکم دے دیا اسحاق ڈار کی اشتہار سے متعلق نیب رپورٹ چار دسمبر تک طلب کرلی گئی۔ ضامن کو شوکاز نوٹس بھی جاری کیا اور 24 نومبر تک جواب جمع کرانے کا حکم دے دیا۔