نگران حکومت پچھلی حکومت سے بھی دوہاتھ آگے نکلی



اسلام آباد(24نیوز) نگران حکومت نے دو ہفتوں میں ہی نئے نوٹ چھاپنے کا رکارڈ بنا ڈالا۔  اوسطا روزانہ 20 ارب 23 کروڑ روپے کے نئے نوٹ جاری کئے گئے۔  زیر گردش نوٹ ملکی تاریخ میں پہلی بار 49 کھرب روپے سے تجاوز کر گئے۔

ضرور پڑھیں:ڈالر سستا ہوگیا

نگران حکومت تو پچھلی حکومتوں سے بھی دوہاتھ آگے نکلی۔ اسٹیٹ بینک کا کہنا ہےکہ جون کے پہلے دو ہفتوں کے دوران اخراجات پورے کرنے کے لیے نگران حکومت نے تین کھرب تین ارب سینتالیس کروڑ روپے مالیت کے نئے نوٹ جاری کیے۔نئے نوٹوں کےبعد مارکیٹ میں زیر گردش نوٹوں کا مجموعی حجم 49 کھرب 18 ارب 33 کروڑ 2 لاکھ روپے کی رکارڈ سطح پر پہنچ گیا۔ 

یہ بھی پڑھیں: ملکی سیاست میں تیزی، غیر ملکی سرمایہ کاری کم ہو گئی

نئے نوٹوں کے اجرا کے ساتھ ساتھ نگران حکومت نے اخراجات کے لیے ایک ہفتے کے دوران کمرشل بینکوں سے 11 کھرب 80 ارب 65 کروڑ روپے قرض بھی لیا جو کہ ایک علیحدہ رکارڈ ہے۔ واضح رہے کہ ن لیگ کی حکومت نے رواں مالی سال کے 11 ماہ کے دوران مجموعی طور پر 5 کھرب 84 ارب روپے کے نئے نوٹ جاری کیے تھے۔

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔