سال 2017 پاکستان کی خارجہ پالیسی کیلئے مشکل رہا


اسلام آباد (24نیوز)  پاکستان کے لئے سفارتی محاذ پر 2017 مشکل سال رہا، خارجہ پالیسی کا محاذ خاصا گرم دکھائی دیا، امریکہ، بھارت اور افغانستان سے پاکستان کے تعلقات کشیدہ رہے۔

تفصیلات کے مطابق سال 2017 بھی کئی سفارتی ناکامیاں اورکامیابیاں سمیٹے اپنے اختتام کی جانب گامزن ہے، بھارت نے ایل او سی اور ورکنگ باونڈری پر بلا اشتعال فائرنگ کا سلسلہ جاری رکھا جس کے نتیجے میں 54 افراد شہید۔ 200 کے قریب زخمی ہوئے اس کے باوجود اقوام متحدہ سمیت کئی اہم فورمز سے اچھی خبریں بھی سنائی دیتی رہیں۔

دوسری جانب کلبھوشن کے معاملے پر پاکستان نے بھارت کو مشکلات سے دوچار کیے رکھا، امریکہ اور پاکستان کے تعلقات میں سرد مہری چھائی رہی، افغانستان میں موجود امن دشمن عناصر پاک افغان تعلقات میں دراڑیں ڈالنے میں کامیاب رہے۔

ماہرین کا کہنا تھا  کہ سعودی عرب اور ایران کے درمیان کشیدگی کے باوجود پاکستان نے توازن کا دامن ہاتھ سے نہیں چھوڑا ،یہ سال اس لحاظ سے بھی بہتر رہا کہ چار سال بعد وزیر خارجہ تعینات کیا گیا۔