خسرو بختیار اور احسن اقبال میں نوک جھونک

خسرو بختیار اور احسن اقبال میں نوک جھونک


اسلام آباد(24 نیوز) قومی اسمبلی میں وفاقی وزیرخسرو بختیار اور احسن اقبال میں نوک جھونک ہوگئی۔

قومی اسمبلی کے اجلاس میں وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی خسروبختیار اور احسن اقبال میں لفظی جنگ چھڑ گئی۔ خسرو بختیارنےکہامسلم لیگ ن کی حکومت نے زراعت کے لئے1ارب روپے رکھے جبکہ ہم نےبڑھا کر 12ارب روپےرکھےہیں۔ یہ سننا تھا کہ سابق وزیربرائے منصوبہ بندی احسن اقبال سے رہا نہ گیا،  کہنے لگے مسلم لیگ ن کی حکومت نےزراعت کیلئے31ارب روپےرکھے تھے جبکہ موجودہ حکومت نے صرف 5 ارب روپےرکھےہیں،  احسن اقبال نےبجٹ دستاویزات لہرادیں۔

بات یہیں ختم نہیں ہوئی، احسن اقبال نے طنز کیا کہ خسرو بختیار کواکنامکس میں نوبل انعام کے لیے نامزد کیا جائے، وفاقی وزیرخسرو بختیار کاشعرپڑھنابھی احسن اقبال کونہ بھایا، کہا آج یہ عمران خان کے بارے میں شعرپڑھ رہے، کبھی یہ نوازشریف کےبارے میں بھی شعرپڑھا کرتے تھے۔ احسن اقبال نےکہازراعت کے بجٹ میں 80 فیصد کمی ہوئی ہے،  وزیر موصوف نے گمراہ کیا ہے۔