سکھ برادری نے مودی کو مسترد کردیا

سکھ برادری نے مودی کو مسترد کردیا


نئی دہلی(24 نیوز) بھارتی پنجاب میں بی جے پی کو شکست کا سامنا کرناپڑا، کانگریس نے واضح برتری حاصل کی اور 8 نشستوں پر کامیابی سمیٹی۔

 بی جے پی بھارت میں جیت گئی مگرپنجاب میں ہارگئی اور ہار بھی ایسی کہ الامان الحفیظ، مطلب یہ کہ ہندوتوا کی پالیسی کو پنجاب کے سکھوں نے مکمل طورپرمسترد کردیاہے، بی جے پی ہندوستان میں چاہے ہندواکثریتی سرکاربنائےمگرپنجاب میں سیکولرکانگریس 8 شستوں میں کامیابی کے ساتھ راج کرے گی۔

پنجاب میں بی جے پی نے گرداسپوراورہوشیارپورمیں کامیابی حاصل کی، ایک نشست پر عام آدمی پارٹی نے میدان مارا جبکہ ایس اے ڈی نےبھی2سیٹیں حاصل کیں۔

پاکستان اورہندوستان کےتناظرمیں اس چیزکودیکھا جائےتوبی جے پی کا پنجاب میں مسترد کیا جانا پاکستان کی طرف سےکرتارپورراہداری کی پہل کا نتیجہ قراردیا جاسکتا ہے، کرتارپورراہداری کے کھولنے کو بی جے پی نےمجبوراًہی تسلیم کیاتھا، جس پرسکھوں نےاپنی ناراضگی کااظہاربی جےپی کو ووٹ نہ دے کر کیا۔