مسئلہ کشمیر،فلسطین حل نہ کرنے سے سلامتی کونسل اعتماد کھو رہی ہے: ملیحہ لودھی


نیو یارک (24نیوز)اقوام متحدہ میں پاکستان کی مستقل مندوب ملیحہ لودھی نے کہا ہے کہ کشمیر اور فلسطین پر قراردادوں پر عملدرآمد نہ ہونے کی وجہ سے دنیا بھر کے عوام کا سلامتی کونسل سے اعتماد اٹھتا جا رہا ہے، کشمیر اور فلسطین کا اقوام متحدہ کی قراردادوں کے منافی کوئی حل قابل قبول نہیں ہے۔
تفصیلات کے مطابق اقوام متحدہ میں مشرقی وسطیٰ کی صورتحال پرمباحثے میں اظہارخیال کرتے ہوئے پاکستان کی مستقل مندوب ملیحہ لودھی نے کہا کہ سلامتی کونسل کشمیر اور فلسطین سے متعلق قرار دادوں پرعمل نہ کراسکی جس کی وجہ سے دنیا بھر کے عوام کا عالمی ادارے سے اعتماد اٹھتا جارہا ہے سلامتی کونسل قراردادوں پر عمل کراکے اپنی حیثیت تسلیم کرائے ورنہ دنیا بھر کے عوام عالمی ادارے سے اعتماد کھودیں گے۔کشمیر اور فلسطین کا اقوام متحدہ کی قراردادوں کے منافی کوئی حل قابل قبول نہیں ہے۔
انہوں نے کہا کہ عالمی برادری فلسطینی پناہ گزینوں کی امداد کے لیے آگے بڑھے،امریکا کی جانب سے فلسطینیوں کی امداد میں کٹوتی افسوسناک ہے۔امریکہ سمیت بعض ممالک کی جانب سے اپنے سفارت خانوں کی یروشلم منتقلی کے فیصلے کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے ملیحہ لودھی کا کہنا تھا کہ اس سے مشرق وسطیٰ میں سکیورٹی کی صورتحال مزید خراب ہوئی۔
مشرق وسطیٰ کی صورتحال پر تبصرہ کرتے ہوئے ملیحہ لودھی کا کہنا تھا کہ تنازعات میں شدت آرہی ہے اور نئے خطرات سامنے آرہے ہیں، شام کے تنازعہ کا واحد حل با مقصد مذاکرات ہیں، مشرق وسطیٰ میں امن صرف منصفانہ فیصلوں سے ہی ممکن ہے۔