حکومتی غفلت کے باعث پورے ملک میں زندگی کا پہیہ جام ہوگیا: شفقت محمود

اسلام آباد (24نیوز) تحریک انصاف کی جانب سے فیض آباد دھرنے کے اختتام کا خیر مقدم، شفقت محمود کہنا تھا کہ حکومتی غفلت کے باعث پورے ملک میں زندگی کا پہیہ جام ہوگیا۔


تفصیلات کے مطابق مرکزی سیکرٹری اطلاعات تحریک انصاف شفقت محمود کا ایک جاری بیان میں کہنا تھا تشدداورقیمتی جانوں کے ضیاع کے بغیر بھی معاملہ کافی پہلے حل کیا جاسکتاتھا۔ راجہ ظفر الحق کمیٹی کی رپورٹ منظرعام پر رکھ کراور ذمہ داروں کیخلاف کارروائی کرکےحکومت قوم کو دقت سے بچا سکتی تھی۔

شفقت محمود نے کہا سچ یہ ہے کہ حکومت نے ابتداءہی سے معاملے کے بارے میں انتہائی غلط انداز اختیار کیا۔ پورے معاملے پر حکومتی ناکامیوں کی فہرست انتہائی طویل ہے۔ حکومت نے انتہائی مشکوک انداز میں ختم نبوت کے حلف نامے میں تبدیلی کی، کمیٹی اور سب کمیٹی کے اراکین کو اس حوالےسے حکومت نے کوئی نوٹس نہیں دیا۔

شفقت محمود کا مزید کہنا تھا دونوں کمیٹیوں کے کسی بھی اجلاس میں کبھی بھی اس پر بحث نہیں کی گئی,اجلاسوں کی محفوظ کارروائی اس حقیقت کی گواہی دے گی۔

ان کا مذید کہنا تھا کاغذات نامزدگی میں ختم نبوت کے حلف نامے میں ترمیم قومی اسمبلی میں پیش کی گئی نہ ہی کبھی اس پر بحث ہوئی۔ معاملے پر راجہ ظفرالحق کی سربراہی میں قائم کمیٹی کی رپورٹ کو چوبیس گھنٹوں میں آناتھا، بارہا مطالبات کے باوجود تاحال یہ رپورٹ منظر عام پر نہیں لائی گئی, فیض آباد میں ناکام آپریشن کے نتیجے میں لوگوں کی زندگیاں ضائع ہوئیں, ناکام آپریشن سے سینکڑوں شہری زخمی ہوئے اور املاک تباہ ہوئیں۔

وزیر داخلہ احسن اقبال نے مضحکہ خیز بیان دیا کہ وہ آپریشن سے لاعلم تھے۔ زندگیوں کے ضیاع پر احسن اقبال اور چوہدری نثار ایک دوسرے پر الزام تراشی میں مصروف ہیں، بحران کے حل کیلئے وزیر قانون کا استعفیٰ کافی پہلے آجانا چاہئیے تھا, ان سنگین غلطیوں کی حکومت براہ راست ذمہ دار ہے۔ نون لیگ کی دور اقتدار میں معیشت زمین بوس ہوچکی ہے۔

انکا کہنا تھا گورننس کا بیڑہ غرق , بیروزگاری اور لوگوں کی مشکلات ناقابل یقین حد تک بڑھ چکی ہیں,قوم نے کافی مصائب اٹھا لئے، اب حکومت کی رخصتی کا وقت آن پہنچا ہے, وزیر اعظم اور کابینہ مستعفی ہوں اور نئے انتخابات کروائے جائیں، قوم کو بحران سے نکالنے کا یہ واحد جمہوری رستہ ہے۔