نوازشریف کی احتساب عدالت میں پیشی،3 ریفرنسز کی سماعت 4 دسمبرتک ملتوی

نوازشریف کی احتساب عدالت میں پیشی،3 ریفرنسز کی سماعت 4 دسمبرتک ملتوی

اسلام آباد (24نیوز) نوازشریف کی آٹھویں مرتبہ احتساب عدالت میں پیشی,وکیل کی غیرحاضری پرعدالت نے تینوں نیب ریفرنسز کی سماعت 4 دسمبرتک ملتوی کردی,صحافیوں کے سوالات پرنوازشریف بولے کہ دوتین دن ٹھہرجائیں آپ سے بہت سی باتیں کرنی ہیں۔


تفصیلات کے مطابق اسلام آباد کی احتساب عدالت میں نیب ریفرنسز کی سماعت ہوئی،نواز شریف ، مریم نوازاورکیپٹن صفدر نے حاضری یقینی بنائی، جج محمد بشیر نے پوچھا کہ خواجہ حارث کہاں ہیں؟جس پرمعاون وکیل نے بتایا کہ وہ سپریم کورٹ میں مصروف ہیں۔

انہوں نے استدعا کی کہ ہائی کورٹ نے ریفرنسزکو یکجا کرنے کی درخواستوں پر فیصلہ محفوظ کررکھا ہے۔ فیصلہ آنے تک مزید گواہوں کے بیانات قلمبند نہ کیے جائیں۔

ڈپٹی نیب پراسیکیوٹر نے گواہان کے بیانات قلمبند کرنے پراصرار کیا، عدالت نے سماعت ملتوی کرنے کی نوازشریف کی درخواست منظورکرلی۔

کمرہ عدالت میں صحافیوں کے سوال پرنوازشریف بولے کہ جج صاحب نے یہاں بات کرنے سے منع کر رکھا ہے دوتین دن ٹھہرجائیں بہت سی باتیں کرنی ہیں۔

مریم نواز کا کہنا تھاکہ وہ والد کے ہوتےہوئے کیسے بات کرسکتی ہیں؟ احتساب عدالت میں 5 گواہان کے بیانات قلمبند ہوچکے ہیں اورآج مزید دو گواہان کے بیانات قلمبند ہونا تھے۔