معصوم ارمش کا قاتل کون؟

معصوم ارمش کا قاتل کون؟


حیدر آباد(24نیوز) حیدرآباد کی معصوم ارمش کو کس نے موت کی وادی میں پہنچایا؟ مقدمہ درج ہونے کے باوجود پولیس اب تک سراغ لگانے میں ناکام ہے، بچی کے والد آفتاب کا کہنا ہے کہ کسی پرشک نہیں، انصاف چاہتے ہیں۔

حیدرآباد میں معصوم ارمش کو کس نے مارا؟کس نے یہ ظلم کیا؟ بچی کو کون لیکر گیا؟ کہاں قتل کیا گیا؟ کس نے بیگ میں لاش ڈال کر سنسان گلی میں پھنیکی، اب تک ان سوالات کا جواب نہ مل سکا۔ پولیس تاحال قاتل کا سراغ لگانے میں نا کام ہے۔سی سی ٹی وی فوٹیج میں دیکھا جاسکتاہے کہ کوئی نقاب پوش بچی کی لاش شاپنگ بیگ میں ڈال کر سنسان گلی میں رکھ رہا ہے۔

ارمش کے والد آفتاب آرائیں کاکہنا ہے کہ کسی سے کوئی دشمنی نہیں، انصاف چاہتے ہیں۔ارمش کے دادا شوکت کاکہنا ہے کہ کسی پر شک نہیں، اکلوتی بیٹی تھی۔ چھ سال بعد اللہ نے رحمت دی تھی، پوسٹ مارٹم کروایاہے۔

بھٹائی اسپتال کی میڈیکولیگل افسر کوثر وقار کا کہنا ہے کہ بچی سے زیادتی کے شواہد نہیں ملے تاہم پوسٹ مارٹم کے بعد موت کی وجہ معلوم ہوسکے گی۔ادھر پولیس نے مقدمہ درج کرکے تحقیقات کا آغاز کردیا ہے۔

واضح رہے کہ ارمش گزشتہ شام 4 بجے گھر سے چیز لینے نکلی تھی، رات کو دس بجے لاش شاپنگ بیگ میں پھینکی گئی تھی۔

 

وقار نیازی

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔