ایٹم بم اور ڈرون کے بعد نئے ہتھیار کی تیاری شروع

ایٹم بم اور ڈرون کے بعد نئے ہتھیار کی تیاری شروع


اسلام آباد (24 نیوز)ایٹم بم اور ڈرون کے بعد اب کیلر روبورٹ پر تحقیق کا عمل شروع ہوچکاہے، کیلر روبوٹ کیا ہے؟ اس روک تھام سے متعلق آگاہی کیلئے سیمینار کا انعقاد ہوا۔

تفصیلات کے مطابق غیر سرکاری تنظیم سپیڈو کے زیر اہتمام کیلر روبوٹ یعنی خونی قاتل سےمتعلق سیمینار کا انعقاد کیا گیا،  جس میں بتایا کہ اسرائیل اور امریکہ سمیت بعض ممالک میں ایسے خوفناک ہتھیارکی تیاری پر کام ہو رہا ہے جس  کو  انسان نہیں بلکہ مشین خود ہی چلائیں گی۔

مقررین نے بتایا کہ خونی قاتل یا کیلر روبوٹ کی روک تھام نہیں ہوئی تو دنیا مزید تباہی کی جانب بڑھے گی لہذا اس حوالے سے بین الاقوامی سطح پر اس حوالے سے معاہدات اور قانون بنانے کی ضرورت ہے۔

مقررین نے مزید بتایا کہ پاکستان دنیا میں سب سے پہلے نمبر پر ملک ہے جو  کیلر روبوٹ کو ’بین‘ کرنے کے لئے کوشاں ہے،تقریب کے شرکاء نے کیلر روبوٹ کی پیداوار  سے قبل ہی روکنے پر زور دیا ہے۔