برطانیہ کے بعد سعودی عرب ن لیگ کی سیاست کا مرکز بن گیا


ریاض (24نیوز)  سعودی عرب ن لیگ کی سیاسی سرگرمیوں کا مرکز بن گیا ، وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف پہلے ہی سعودی عرب میں موجود ہیں، لیگی رہنما پرویز ملک ان کی اہلیہ اور خواجہ سعد رفیق بھی پہنچ گئے، سابق وزیر اعظم نواز شریف آئندہ دو تین روز میں روانگی کیلئے پر تول رہے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق مسلم لیگ ن کی قیادت نے برطانیہ کے بعد سعودی عرب کو ملکی سیاست کا مرکز بنا لیا،وزیر اعلٰی پنجاب شہباز شریف جمعرات کو خفیہ دورے پر سعودی عرب پہنچ گئے، جہاں انہوں نے مدینہ منورہ میں روضہ رسول صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم پر حاضری دی، مسجد نبوی میں نمازیں ادا کیں اور ملکی سلامتی کیلئے دعائیں بھی مانگیں۔

شہباز شریف نے مدینہ منورہ میں ترکی کے وزیراعظم سمیت اہم شخصیات سے ملاقات کی۔

شہباز شریف کے پیچھے پیچھے رکن قومی اسمبلی پرویز ملک اور وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق بھی سعودی عرب پہنچ چکے ہیں، دونوں رہنما قومی ایئرلائن کی پرواز پی کے 747 کے ذریعے مدینہ منورہ پہنچے۔

سابق وزیر اعظم نواز شریف کا بھی آئندہ دو تین روز میں سعودی عرب روانگی کا پروگرام ہے، سعودی عرب روانگی کے پیش نظر نواز شریف کا سرگودھا میں جلسہ بھی ملتوی کردیا گیا، اسی دوران میاں نواز شریف نے مشیر قومی سلامتی ناصر جنجوعہ سے بھی ملاقات کی، جس میں ملکی سلامتی کی صورتحال پر تبادلہ خیال ہوا۔

ملک کے سیاسی موسم کی صورتحال پر نظر رکھنے والے ن لیگ کی قیادت اور رہنماؤں کی سعودی عرب میں موجودگی انتہائی اہمیت کا حامل قرار دے رہے ہیں۔

ویڈیو دیکھیں: