توہین عدالت کیس،احسن اقبال نے ہاتھ جوڑ لیے

توہین عدالت کیس،احسن اقبال نے ہاتھ جوڑ لیے


لاہور( 24نیوز ) توہین عدالت کیس میں احسن اقبال نے عدالت میں ہاتھ جوڑ لیے سابق وزیر داخلہ نے عدالت سے غیر مشروط معافی مانگ لی۔
تفصیلات کے مطابق لاہور ہائیکورٹ میں جسٹس مظاہر علی اکبر نقوی کی سربراہی میں 3 رکنی فل بینچ نے سابق وفاقی وزیر احسن اقبال کے خلاف توہین عدالت کیس کی سماعت کی، احسن اقبال عدالت میں پیش ہوئے اور تفصیلی جواب جمع کرایا۔

یہ بھی پڑھیں:   سابق ایم این اے سمیت 4نون لیگیوں کو قید ہوگئی
جواب میں کہا گیا کہ کل سپریم کورٹ نے ایک شخص کو نا اہل کیا، وہ سپریم کورٹ کے باہر کہہ رہا تھا کہ میں نے کبھی معافی نہیں مانگی لیکن میں عدلیہ کی عزت کرتا ہوں۔
جسٹس مظاہر اکبر نے احسن اقبال سے کہا کہ آپ کے تحریری جواب میں معافی کے لیے وہ الفاظ نہیں جو قانونی طور پر ہونے چاہئیں،اس پر احسن اقبال نے کہا کہ میں موت کے منہ سے آیا ہوں، میرے لیے عہدے حیثیت نہیں رکھتے، عدالت سے غیر مشروط معافی مانگتا ہوں۔عدالت نے کیس سماعت دو جولائی تک ملتوی کرتے ہوئے وکلا کو مزید دلائل کے لئے طلب کر لیا۔