ایون فیلڈ ریفرنس:صفدر اور مریم کے وکیل کا کوین بنچ کی شہادت قبول کرنے سے انکار

ایون فیلڈ ریفرنس:صفدر اور مریم کے وکیل کا کوین بنچ کی شہادت قبول کرنے سے انکار


اسلام آباد( 24نیوز )اسلام آباد کی احتساب عدالت میں آج ایون فیلڈ ریفرنس کی سماعت ہوئی، کیپٹن صفدر اور مریم نواز کے وکیل نے دلائل میں کہا کہ التوفیق میں شہباز شریف، میاں شریف اور عباس شریف فریقین تھے۔ کوین بینچ کے فیصلے کی کاپی قابل قبول شہادت ہی نہیں۔
ایون فیلڈ ریفرنس میں مریم نواز اور کیپٹن ر صفدر کے وکیل امجد پرویز نے حتمی دلائل دیتے ہوئے کہا کہ نیب نے مظہر رضا بنگش کا ایک لیٹر پیش کیا،اس کون ثابت کر سکتا ہے،نیب کے دفتر میں کاغذی کاروائی کی گئی۔
امجد پرویز کا کہنا تھا کہ مظہر بنگش کی جمع کرائی گئی دستاویز فوٹو کاپی کی صورت میں تھے، جو عدالتی ریکارڈ کا حصہ نہیں بن سکتے۔ امجد پرویز نے بتایا کہ شیزی نقوی نے کہا کہ حدیبیہ اور التوفیق کے معاملات کا انہیں ذاتی طور پر علم نہیں،امجد پرویز نے دلائل میں کہا کہ رحمان ملک کی رپورٹ ایف آئی اے کی آفیشل رپورٹ نہیں، سماعت کے دوران احتساب عدالت کے جج محمد بشیر سردار مظفر اور امجد پرویز میں مکالمہ بھی ہوا۔امجد پرویز نے کہا کہ میں نے اتنی اچھی خوراک نہیں کھائی جتنی خواجہ حارث نے کھائی ہے۔

یہ بھی پڑھیں:   شاہد خاقان عباسی الیکشن لڑنے کیلئے اہل ہوگئے
جج محمد بشیر نے کہا منگل کو گواہ کو بلا لیتے ہیں،جس کے بعد عدالت نے ایون فیلڈ پراپرٹی ریفرنس کی سماعت پیر تک ملتوی کر دی گئی ، عدالت نے العزیزیہ ریفرنس میں واجد ضیا کو منگل کو طلب کر لیا۔