کے الیکٹرک کی لاپرواہی نے آٹھ سالہ معصوم بچہ معذور کردیا

کے الیکٹرک کی لاپرواہی نے آٹھ سالہ معصوم بچہ معذور کردیا


کراچی(24نیوز) کے الیکٹرک کی لاپرواہی نے معصوم بچے کے دونوں بازو ضائع کردیے، احسن آباد میں بجلی کے تار سے جھلسنے والے کم سن عمر کے دونوں بازو آپریشن کے بعد کاٹ دئیے گئے۔والدین نے کے الیکٹرک کے خلاف قانونی کارروائی کا اعلان کردیا۔

کے الیکٹرک کی بد انتظامی شہر میں تاروں کا جنجال تو کم نہ کرسکی, لیکن معصوم بچے کے معذور ہونے کا سبب ضرور بن چکی ہے. احسن آباد کا آٹھ سالہ عمرجو عید کے روز بجلی کی تار گرنے سے زخمی ہوا  اور زندگی بھر کے لیے معذور ہوگیا. والد کا مطالبہ ہے کہ معصوم بچے کے لیے تاحیات وظیفہ مقرر کیا جائے. والد کی نم آنکھوں پر سوال ہے تو بس یہ کہ اسکے دکھوں کا مداوا کون کرے گا .

گورنر سندھ عمران اسماعیل نے واقعہ کا نوٹس لے کر کے الیکٹرک حکام سے وضاحت طلب کر لی اور کمشنر کراچی سے واقعہ کی تفصیلی رپورٹ بھی مانگ لی۔

وقار نیازی

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔